ہوم » نیوز » معیشت

ٹوائے کیتھون 2021 میں تجاویز بھیجنے کا آج تھا آخری دن، چنے گئے آئیڈیاز کا 12 فروری کو ہو گا اعلان

مرکزی حکومت نے گھریلو کھلونا صنعت کو فروغ دینے، میک ان انڈیا کی حوصلہ افزائی کرنے اور کھیل اور کھلونوں کی ترقی میں بچوں کی شراکت داری بڑھانے کے لئے 5 جنوری 2021 کو ٹوائے کیتھون 2021 کا آغاز کیا تھا۔ اس کے تحت طلبہ کو نئے بورڈ گیم، آوٹ ڈور گیمس اور ڈیجیٹل گیمس کو فروغ دینے کے لئے آن لائن تجاویز بھیجنی تھیں۔ آج تجاویز اور آئیڈیاز بھیجنے کا آخری دن تھا۔

  • Share this:
ٹوائے کیتھون 2021 میں تجاویز بھیجنے کا آج تھا آخری دن، چنے گئے آئیڈیاز کا 12 فروری کو ہو گا اعلان
ٹوائے کیتھون 2021 میں تجاویز بھیجنے کا آج تھا آخری دن

نئی دہلی۔ مرکزی حکومت نے گھریلو کھلونا صنعت (Local Toys Industry) کو فروغ دینے، میک ان انڈیا کی حوصلہ افزائی کرنے اور کھیل اور کھلونوں کی ترقی میں بچوں کی شراکت داری بڑھانے کے لئے 5 جنوری 2021 کو ٹوائے کیتھون 2021 کا آغاز کیا تھا۔ اس کے تحت طلبہ کو نئے بورڈ گیم، آوٹ ڈور گیمس اور ڈیجیٹل گیمس کو فروغ دینے کے لئے آن لائن تجاویز (Online Proposals) بھیجنی تھیں۔ آج تجاویز اور آئیڈیاز بھیجنے کا آخری دن تھا۔


مرکزی حکومت اب موصولہ تجاویز اور آئیڈیاز کا 21 جنوری سے 8 فروری تک جائزہ (Evaluation) لے گی۔ اس کے بعد 12 فروری کو چنے گئے آئیڈیاز (Shortlisted Ideas) کا اعلان کیا جائے گا۔ پھر 23 سے 25 فروری تک ٹوائے کیتھون 2021 کا گرانڈ فنالے ہو گا۔ ٹوائے کیتھون 2021 کے فاتح کو 50 لاکھ روپئے کا انعام دیا جائے گا۔ بتا دیں کہ مرکزی وزیر تعلیم رمیش پوکھریال نشنک نے اور خواتین اور بہبود اطفال کی وزیر اسمرتی ایرانی نے 5 جنوری کو ٹوائے کیتھون 2021 کو لانچ کیا تھا۔ ساتھ ہی دونوں مرکزی وزرا نے اسی دن ٹوائے کیتھون پورٹل کا آغاز بھی کیا تھا۔


ٹوائے کیتھون کا مقصد ہندستان کے ایک ارب ڈالر کے کھلونا بازار کا استعمال کرنا ہے۔ حکومت ٹوائے کیتھون 2021 کے ذریعہ ملک کے 33 کروڑ طلبہ کی ہنرمندی اور مہارت کا استعمال کھلونا صنعت کو رفتار دینے اور اسے نئی بلندی پر پہنچانے کے لئے استعمال کرنا چاہتی ہے۔ ٹوائے کیتھون 2021 میں طلبہ کے علاوہ اساتذہ، ٹوائے اینڈ ڈیزائن ماہرین اور اسٹارٹ اپس سے ہندستانی ثقافت، اقدار اور عظیم لوگوں سے منسلک کھیلوں اور کھلونوں کے آئیڈیاز طلب کئے گئے تھے۔ ٹوائے کیتھون کا مقصد ہندستانی اقدار پر مبنی اختراعی کھلونوں کو بڑھاوا دینا ہے جو بچوں میں مثبت رویہ اور اچھے اقدار کو فروغ دے سکے۔


واضح رہے کہ ہندستان 80 فیصد کھلونے برآمد کرتا ہے اور حکومت ملک کو اس شعبے میں خود کفیل بنانے کے لئے دیسی کھلونوں کی صنعت کو فروغ دینے کی جانب کام کر رہی ہے۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Jan 20, 2021 10:00 PM IST