உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    قانون کی خلاف ورزی کر رہی ہیں بڑی ای کامرس کمپنیاں، CAIT نے وزیر اعظم مودی کو لکھا خط

    قانون کی خلاف ورزی کر رہی ہیں بڑی ای کامرس کمپنیاں، CAIT نے وزیر اعظم مودی کو لکھا خط

    قانون کی خلاف ورزی کر رہی ہیں بڑی ای کامرس کمپنیاں، CAIT نے وزیر اعظم مودی کو لکھا خط

    ملک میں ای کامرس کمپنیوں کے ذریعہ قانون کو طاق پر رکھ کر تجارت کرنا بھاری پڑ سکتاہ ے۔ کاروباری تنظیم کیٹ نے وزیر اعظم نریندر مودی کو اس ای کامرس کمپنیوں کے ذریعہ حکومت کی پالیسیوں اور قانون کی خلاف ورزی کرنے سے متعلق ایک خط لکھا ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ملک میں ای کامرس کمپنیوں کے ذریعہ قانون کو طاق پر رکھ کر تجارت کرنا بھاری پڑ سکتاہ ے۔ کاروباری تنظیم کیٹ نے وزیر اعظم نریندر مودی کو اس ای کامرس کمپنیوں کے ذریعہ حکومت کی پالیسیوں اور قانون کی خلاف ورزی کرنے سے متعلق ایک خط لکھا ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی کو آج بھیجے گئے خط میں کنفیڈریشن آف آل انڈیا ٹریڈرس (CAIT) نے کہا ہے کہ پورے ملک کے تاجر حکومت کے ’ڈیجیٹل انڈیا’ پروگرام کے تحت ای کامرس تجارت کو اپنانے کے لئے بے حد پُرجوش ہیں، لیکن، بڑی ای کامرس کمپنیوں کے ذریعہ ایف ڈی آئی پالیسی (FDI Policy) اور دیگر قوانین اور ضوابط کی بار بار خلاف ورزی کرنے کی وجہ سے ’ڈیجیٹل کامرس‘ کو اپنانے کے لئے ایک میجر بلاکر ثابت ہورہا ہے۔

      کیٹ نے وزیر اعظم نریندر مودی سے ایسی ای کامرس کمپنیوں کے خلاف ضروری کارروائی کرنے کا حکم دینے کی گزارش کی ہے۔ کیٹ نے وزیر اعظم مودی سے ملک کے سبھی نکڑ اور کونوں میں لوکل فار ووکل (Vocal for Local) اور آتم نربھر بھارت ابھیان کو کامیاب بنانے کے لئے قومی، ریاست اور ملک کے ہرایک ضلع سطح پر ایک مشترکہ کمیٹی کو تشکیل دینے کا مشورہ دیا ہے۔

      کیٹ کے قومی صدر بی سی بھرتیا اور قومی جنرل سکریٹری پرین کھنڈیلوال نے کہا کہ یہ بے حد بدقسمتی ہے کہ قانون کے محافظ ہونے کے باوجود، مختلف محکمہ حکومت کی پالیسی اور قوانین پر عمل کروانے میں کامیاب نہیں ہو پائے ہیں! انہوں نے وزیر اعظم نریندر مودی سے گزارش کی ہے کہ ہندوستان میں ای - کامرس تجارت کو بہتر طریقے سے چلانے کے لئے ای- کامرس پالیسی کا جلد اعلان کیا جانا ضروری ہے۔ وہیں ای - کامرس تجارت کو ریگولیٹ اور مانیٹر کرنے کے لئے ایک حقوق حاصل ریگولیٹری اتھارٹی کی تشکیل بھی بے حد ضروری ہے۔ بی سی بھرتیا اور کھنڈیلوال نے وزیر اعظم نریندر مودی سے کہا کہ ان کی لوکل فار ووکل اور آتم نربھر بھارت کی  گزارش ملک کے گھریلو تجارت کے لئے بے حد فیصلہ کن ثابت ہوسکتا ہے۔ اس کے تحت چھوٹے مینوفیکچررز کے ذریعہ اعلی معیار کی توسیع کی جاسکتی ہے اور اس نظریے سے اس مہم کو ملک کے ہرکونے میں لے جانے کی بڑی ضرورت ہے۔

      کیٹ نے وزیر اعظم مودی کو مشورہ دیا ہےکہ ہر ریاست کی قومی سطح، ریاستی سطح اور ضلعی سطح پر سرکاری عہدیداروں کی مشترکہ کمیٹی تشکیل دی جائے، جس میں کاروباری، صارف، سول سوسائٹی اور قومی سطح پر چھوٹے مینوفیکچررز کے نمائندے ہوں۔ اس مہم کو پورے ملک میں لوگوں کے درمیان چلنا چاہئے اور زیادہ سے زیادہ لوگ اس اختراعی مہم میں شامل ہوسکتے ہیں۔

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: