ہندستان۔پاکستان کشیدگی: عمران خان حکومت کے اس فیصلے سے پاکستانی عوام کو بڑا جھٹکا

میڈیا رپورٹس میں بتایا جارہا ہے کہ پاکستان کے سنیما گھروں میں ہندستانی فلمیں نہیں دکھائی جائیں گی۔ اس بارے میں پاکستان کے وزیر اعظم کی اسپیشل اسسٹنٹ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے بیان جاری کیا ہے۔

Aug 08, 2019 05:17 PM IST | Updated on: Aug 08, 2019 06:20 PM IST
ہندستان۔پاکستان کشیدگی: عمران خان حکومت کے اس فیصلے سے پاکستانی عوام کو بڑا جھٹکا

حال ہی میں مودی حکومت نے بڑا فیصلہ لیتے ہوئے جموں۔کشمیر سے آرٹیکل 370 کو منسوخ کردیا ہے۔ جس کے بعد دنیا بھر سے اس فیصلے کو لیکر طرح۔طرح کے رد عمل مل رہے ہیں۔ اس فیصلے کے بعد پاکستان نے ہندستان کے ساتھ تجارتی رشتے ختم کردئے ہیں۔ وہیں سمجھوتہ ایکسپریس خدمات کو بھی معطل کردیا گیا۔ تاہم، اب خبریں آرہی ہیں کہ پاکستان میں ہندستانی فلموں پر بھی روک لگ گئی ہے۔

میڈیا رپورٹس میں بتایا جارہا ہے کہ پاکستان کے سنیما گھروں میں ہندستانی فلمیں نہیں دکھائی جائیں گی۔ اس بارے میں پاکستان کے وزیر اعظم کی اسپیشل اسسٹنٹ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے بیان جاری کیا ہے۔

فردوس عاشق اعوان نےکہا ہے کہ 'پاکستان کے سنیما گھروں میں کوئی ہندستانی فلم نہیں دکھائی جائے گی'۔ پاکستان میں ہندستانی فلموں پر پابندی کی خبریں تو کئی مرتبہ آئی ہیں لیکن ایسا کیا نہیں گیا۔ اب جب ہندستانی فلموں  پر پابندی لگ گئی ہے تو اس میں پاکستان کو ہی بھاری نقصان جھیلنا پڑ سکتا ہے۔ بتا دیں کہ یہ پہلے بھی سامنے آچکا ہے کہ اگر ایسے اقدام سے پاکستان میں پائریسی کا کاروبار بڑھ سکتا ہے۔ اس کے علاوہ کافی اقتصادی نقصان بھی ہوسکتا ہے۔

Loading...

Loading...