لتا منگیشکر کے اہل خانہ کا بیان: سدھر رہی ہے لتا جی کی طبیعت میں سدھار لیکن اب بھی اسپتال میں داخل

پھیپھڑوں میں انفیکشن اور نمونیا کی وجہ سے پانچ دن سے اسپتال میں داخل معروف گلوکارہ لتا منگیشکر کی حالت اب مستحکم ہے اوروہ صحت یاب ہو رہی ہیں۔

Nov 16, 2019 02:50 PM IST | Updated on: Nov 16, 2019 02:50 PM IST
لتا منگیشکر کے اہل خانہ کا بیان: سدھر رہی ہے لتا جی کی طبیعت میں سدھار لیکن اب بھی اسپتال میں داخل

پھیپھڑوں میں انفیکشن اور نمونیا کی وجہ سے پانچ دن سے اسپتال میں داخل معروف گلوکارہ لتا منگیشکر کی حالت اب مستحکم ہے اوروہ صحت یاب ہو رہی ہیں۔ جمعہ کے روز لتا منگیشکر کے اہل خانہ کے ذرائع نے یہ اطلاع دی۔ وہ پیر سے ہی بریچ کینڈی اسپتال میں داخل ہیں ۔

جمعرات کی شب ان کے ٹویٹر اکاؤنٹ سے یہ اطلاع دی گئی ،’’لتا دیدی کی حالت مستحکم ہے اور وہ صحت یاب ہو رہی ہیں۔ آپ کی فکر، دیکھ بھال اور دعاؤں کے لئے آپ کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔

ان کی ٹیم کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے ، ’’درخواست ہے کہ افواہوں پر توجہ نہ دیں اور رد عمل ظاہر نہ کریں، آئیے ہم سب مل کر ان کی لمبی زندگی کے لئے دعا کریں۔

لتا منگیشکر کو نمانیا اور پھیپھڑوں میں انفیکشن کی شکایت ہے۔ اسپتال ذرائع نے بتایا ، ’’ان کی صحت بہتر ہورہی ہے لیکن اس میں کچھ وقت لگے گا۔ انہیں نمونیا ہے اور پھیپھڑوں میں انفیکشن ہے۔ کسی بھی شخص کو اس طرح کی بیماری سے صحت یاب ہونے میں وقت لگتا ہے"۔

واضح رہے کہ ہندستان میں سب سے معزز پلے بیک سنگرس میں سے ایک لتا منگیشکر نے 36 سے زیادہ ہندستانی زبان میں گایا ہے۔ اکیلے ہی ہندی میں انہوں نے 1،000 سے زیادہ گیتوں کیلئے اپنی آواز دی ہے۔ ان کی پیدائش 28 ستمبر 1929 کو ہوئی۔ لتامنگیشکر نے بھارتی فلموں کے لئے ہزاروں گانے گائے، گلوکاری کے شعبے میں اعلیٰ خدمات پر اُنہیں2001 میں بھارت کے سب سے بڑے سول ایوارڈ’ بھارت رتن‘سے بھی نوازا گیا۔ اس سے پہلے انہیں دادا صاحب پھالکے اعزاز سے بھی نوازا جا چکا ہے۔

Loading...