تاج محل کی طرح ہی پہاڑ بھی بنے محبت کی نشانی : نوازالدين

بالی ووڈ اداکار نواز الدين صدیقی چاہتے ہیں کہ تاج محل کی طرز پر گہلور کے پہاڑ کو بھی محبت کی نشانی کے طور پر جانا جائے

Aug 23, 2015 02:01 PM IST | Updated on: Aug 23, 2015 02:02 PM IST
تاج محل کی طرح ہی پہاڑ بھی بنے محبت کی نشانی : نوازالدين

ممبئی : بالی ووڈ اداکار نواز الدين صدیقی چاہتے ہیں کہ تاج محل کی طرز پر گہلور کے پہاڑ کو بھی محبت کی نشانی کے طور پر جانا جائے ۔ نواز الدین  نے ڈائریکٹر کیتن مہتا کی فلم 'مانجھی دی ماونٹنمین میں گہلور کے رہائشی دشرتھ مانجھی کا رول ادا کیا ہے، جنہوں نے اپنی بیوی کی یاد میں 22 سال کی انتھک محنت کے بعد پہاڑ کاٹ کر گاؤں والوں کے لئے چھوٹا راستہ تیار کیا تھا ۔

نوازالدين نے یہاں فلم کی اسپیشل اسکریننگ کے موقع پر کہا کہ جب لوگ گہلور میں پہاڑ دیکھنے جائیں ، تو وہ پہاڑ اور تاج محل کا موازنہ کریں ۔ جب مانجھی نے اسے بنایا ، تب لگن اور جذبہ زیادہ تھا ۔ ہمیں امید ہے کہ مستقبل میں اسے محبت کی نشانی تصور کیا جائے گا ۔

دشرتھ مانجھی کے گاؤں کا دورہ کرنے کے تجربے کو شیئر کرتے ہوئے نواز الدين نے کہا کہ ماحول کافی جذباتی تھا ۔ 'ماؤنٹین مین' کے نام سے مشہور دشرتھ مانجھی کو اپنی زخمی بیوی کے علاج کے لئے طویل راستہ طے کرتے ہوئے قریبی اسپتال جانا پڑا تھا، جس میں ان کی بیوی کی موت ہو گئی تھی ۔

اس کے بعد دشرتھ مانجھی نے اکیلے ایک ہتھوڑی اور چھینی کی مدد سے دن رات انتھک محنت کرتے ہوئے 22 برسوں میں دھوپ، بارش، سردی گرمی سہتے ہوئے پہاڑ کاٹ کر گاؤں کے لئے قریبی شہر تک جانے کا چھوٹا سا راستہ بنا دیا ۔  دشرتھ مانجھی کی زندگی پر بنی اس فلم 'مانجھی دی ماؤنٹین مین' میں دشرتھ کی بیوی کا رول اداکارہ رادھیکا اپٹے نے ادا کیا ہے ۔

Loading...

Loading...