ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پاکستان نے ہندوستانی سرحد پر ڈرون سے گرائے 11 ہینڈ گرینیڈ، فائرنگ کرکے سیکورٹی اہلکاروں نے بھگایا

ہندوستان - پاکستان سرحد (India-Pakistan border) پر برآمد کئے گئے سبھی ہینڈ گرینیڈ (Hand Grenad) پاکستان (Pakistan) کے راولپنڈی میں ایک آرڈیننس فیکٹری میں تیار کئے گئے ہیں۔

  • Share this:
پاکستان نے ہندوستانی سرحد پر ڈرون سے گرائے 11 ہینڈ گرینیڈ، فائرنگ کرکے سیکورٹی اہلکاروں نے بھگایا
پاکستان نے ہندوستانی سرحد پر ڈرون سے گرائے 11 ہینڈ گرینیڈ، فائرنگ کرکے سیکورٹی اہلکاروں نے بھگایا

نئی دہلی: پنجاب (Punjab) کے گرداس پور میں ہندوستان - پاکستان سرحدی (India-Pakistan border) علاقے سے ہندوستان میں دہشت پھیلانے کی پاکستان (Pakistan) کی سازش کا پردہ فاش ہوا ہے۔ خبر ہے کہ پاکستان کی طرف سے ڈرون کی مدد سے ہندوستانی سرحد پر 11 ہینڈ گرینیڈ پھینکے گئے ہیں۔ ہندوستانی سرحد پر برآمد کئے گئے سبھی ہینڈ گرینیڈ پاکستان کے راولپنڈی میں ایک آرڈیننس فیکٹری میں تیار کئے گئے ہیں۔


واضح رہے کہ ہفتہ کی دیر شب چکری بارڈر پر بی ایس ایف کے جوانوں نے ہندوستانی سرحد پر ایک ڈرون کو آتے ہوئے دیکھا تھا۔ اس کے بعد بی ایس ایف کے جوان الرٹ ہوگئے اور انہوں نے کئی راونڈ فائرنگ کی۔ حالانکہ جوان ڈرون کو گرانے میں کامیاب نہیں ہوسکے اور ڈرون واپس پاکستان کی طرف لوٹ گیا۔ اس حادثہ کے بعد پولیس اور بی ایس ایف کی ٹیم نے اتوار صبح اسلاچ گاوں میں سرچ آپریشن چلایا۔ سرچ آپریشن کے دوران گاوں کے پاس سے 11 ہینڈ گرینیڈ برآمد ہوئے۔ ایک سینئر پولیس افسر نے بتایا کہ گرینیڈ کا باکس ایک لکڑی کے فریم سے جڑا ہوا تھا اور ایک نائیلان کی رسی کے سہارے ڈرون سے زمین پر اتارا گیا تھا۔


ہندوستان کی سرحد سے برآمد کئے گئے گرینیڈ آرجے ٹائپ ایچ جی-84 سیریز کے ہیں۔ ان گرینیڈ کی رینج 30 میٹر ریڈیئس تک ہوتی ہے۔ واضح رہے کہ ایچ جی-84 گرینیڈ کا استعمال ہندوستان میں 2008 ممبئی دہشت گردانہ حملے، 1993 دہشت گردانہ حملے، 2001 پارلیمنٹ حملے میں بھی ہوا ہے۔

Published by: Nisar Ahmad
First published: Dec 21, 2020 06:26 PM IST