உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دہلی کے چیف سکریٹری سے مار پیٹ معاملے میں کیجریوال اور منیش سسودیا سمیت 11 اراکین اسمبلی بری، امانت اللہ خان کے خلاف مقدمہ طے

    دہلی کے چیف سکریٹری سے مار پیٹ معاملے میں کیجریوال اور منیش سسودیا سمیت 11 اراکین اسمبلی بری

    دہلی کے چیف سکریٹری سے مار پیٹ معاملے میں کیجریوال اور منیش سسودیا سمیت 11 اراکین اسمبلی بری

    دہلی کے چیف سکریٹری انشو پرکاش ہراسانی معاملہ میں عام آدمی پارٹی کے دو اراکین اسمبلی کے خلاف آج دہلی کی ایک عدالت نے الزام طے کر دیا۔ راوز ایوینیو کورٹ نے اس معاملے میں وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال اور نائب وزیر اعلیٰ سمیت 11 اراکین اسمبلی کو بری کردیا ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: دہلی کے چیف سکریٹری انشو پرکاش ہراسانی معاملہ میں عام آدمی پارٹی کے دو اراکین اسمبلی کے خلاف آج دہلی کی ایک عدالت نے الزام طے کر دیا۔ راوز ایوینیو کورٹ نے اس معاملے میں وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال اور نائب وزیر اعلیٰ سمیت 11 اراکین اسمبلی کو بری کردیا ہے۔ اس معاملے میں کل 13 لوگ ملزم تھے، جن میں سے صرف 2 اراکین اسمبلی کے خلاف عدالت نے الزامات طے کئے ہیں۔ پرکاش جروال اور امانت اللہ خان کے خلاف الزام طے ہوئے ہیں۔

      راوز ایوینیو کورٹ کا فیصلہ آنے کے بعد دہلی کے نائب وزیر اعلیٰ منیش سسودیا نے فوراً اس کی اطلاع شیئر کی۔ ساتھ ہی بتایا کہ منیش سسودیا اس بارے میں ڈیجیٹل پریس کانفرنس کریں گے۔ دوسری جانب وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال نے بھی عدالت کے فیصلے کے بعد ٹوئٹ کرکے اسے سچائی کی جیت بتایا۔ سوشل میڈیا پر عدالت کے فیصلے کی جانکاری دینے والے ایک صارف کے ٹوئٹ پر ردعمل دیتے ہوئے اروند کیجریوال نے لکھا، ’ستیہ میو جیتے‘۔ آپ کو بتا دیں کہ فروری 2018 میں دہلی کے اس وقت کے چیف سکریٹری انشو پرکاش نے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال اور عام آدمی پارٹی کے اراکین اسمبلی پر وزیر اعلیٰ کی رہائش گاہ پر مار پیٹ کا الزام لگایا تھا۔



      اس معاملے میں وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال اور نائب وزیر اعلیٰ منیش سسودیا سمیت کل 13 ملزم تھے، جن میں سے 11 کو بری کرنے کا حکم آج عدالت نے دیا ہے۔ صرف دو اراکین اسمبلی کے اوپر ہی الزامات طے کئے گئے ہیں، جن اراکین اسمبلی کو عدالت نے بری کر دیا، ان میں نتن تیاگی، ریتو راج گووند، سنجیو جھا، اجے دتہ، راجیش رشی، راجیش گپتا، مدن لال، پروین کمار اور دنیش موہنیا شامل ہیں۔ وہیں امانت اللہ خان اور پرکاش جروال کے خلاف معاملے میں الزامات طے کئے گئے ہیں۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: