ٹوٹ کی دہلیزپرشیوسینا، کانگریس - این سی پی کےساتھ جانے سے17 اراکین اسمبلی ناراض

 بتایا جارہا ہے کہ شیو سینا کے کئی اراکین اسمبلی ہندتوا کا موضوع نہیں چھوڑنا چاہتے ہیں۔ پارٹی کے سینئرلیڈرمنوہرجوشی ان اراکین اسمبلی کولے کرماتوشری پہنچے ہیں۔

Nov 20, 2019 04:12 PM IST | Updated on: Nov 20, 2019 04:42 PM IST
ٹوٹ کی دہلیزپرشیوسینا، کانگریس - این سی پی کےساتھ  جانے سے17 اراکین اسمبلی ناراض

کانگریس - این سی پی اتحاد سے شیو سینا میں بغاوت۔

ممبئی: مہاراشٹرمیں ایک طرف کانگریس - این سی پی اورشیوسینا کے اتحاد کی خبریں زورپکڑ رہی ہیں، وہیں اب خبرہے کہ شیوسینا میں اندرونی طورپرسب کچھ ٹھیک نہیں ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ کانگریس اوراین سی پی کے ساتھ شیوسینا کے جانے کولے کراراکین  اسمبلی میں ناراضگی پائی جارہی ہے اوروہ ایسا نہیں چاہتے ہیں۔ ایسے میں یہ بھی بات سامنے آرہی ہے کہ شیوسینا میں اس کولے کرپھوٹ پڑسکتی ہے۔ حالانکہ اراکین اسمبلی کو منانے کی کوشش کی جارہی ہے اوراس کام میں پارٹی کے ہی سینئرلیڈرمنوہرجوشی لگے ہوئے ہیں۔ اطلاعات کے مطابق، ناراض اراکین اسمبلی کسی بھی حال میں ہندتوا کا موضوع نہیں چھوڑنا چاہتے ہیں۔

ماتوشری پہنچے اراکین اسمبلی

بتایا جارہا ہے کہ اراکین اسمبلی کومنانے کے لئے منوہرجوشی پوری کوشش کررہے ہیں اوراب وہ ان 17 اراکین اسمبلی کولے کرپارٹی سربراہ ادھوٹھاکرے سے ملنے ماتوشری پہنچ گئے ہیں۔ یہ سبھی اراکین اسمبلی مغربی مہاراشٹراورمراٹھ واڑہ علاقے کے ہیں۔
Loading...

ہندتوا کا موضوع چھوڑنے سے بھی ناراض

سبھی اراکین اسمبلی کا کہنا ہے کہ پارٹی ہمیشہ ہندتوا کے موضوع پرچلی ہے اورایسے میں کانگریس - این سی پی کا ساتھ لینا صحیح نہیں ہے۔ ناراض اراکین اسمبلی کسی بھی حال میں ہندتوا کا موضوع نہیں چھوڑنا چاہتے ہیں۔

پہلے پارٹی کے ہی ایم ایل اے نے کیا تھا یہ دعویٰ

اس سے قبل شیوسینا کے رکن اسمبلی عبدالستارنے دعویٰ کیا کہ صوبے میں حکومت کی حلف برداری تقریب 25 یا 26 نومبرکوہی ہوسکتی ہے۔ پارٹی کے رکن اسمبلی عبدالستارنے کہا ہے کہ پارٹی سربراہ ادھوٹھاکرے نے سبھی 56 اراکین اسمبلی کوممبئی بلالیا ہے۔ عبدالستارنے بتایا کہ ادھوٹھاکرے نے سبھی اراکین اسمبلی کوآدھارکارڈ، پین کارڈ اورپانچ سے 6 دنوں کے کپڑے ساتھ لانے کے حکم دیئے ہیں۔ ان دنوں میں سبھی اراکین اسمبلی ممبئی میں ہی رہیں گے اورکہیں نہیں جائیں گے۔

Loading...