ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

نوکری دلانے کے نام پر خاتون کے ساتھ اجتماعی عصمت دری دو ملزمین پولیس کی گرفت میں

اطلاعات کے مطابق، نالا سوپارہ ایسٹ میں رہنے والی 37 سالہ خاتون ویرارمغرب کے گلوبل سٹی ایریا میں کھانا پکاتی تھی۔ وہیں اس کی پہچان ایک نوجوان سے ہوگئی، جو ایمیزون کمپنی میں پارسل دستیاب کرانے کا کام کرتا تھا۔

  • Share this:
نوکری دلانے کے نام پر خاتون کے ساتھ اجتماعی عصمت دری دو ملزمین پولیس کی گرفت میں
نوکری دلانے کے نام پر خاتون کے ساتھ اجتماعی عصمت دری دو ملزمین پولیس کی گرفت میں

ممبئی: انسانیت کے نام پر شرمسار کرنے والا واقعہ سامنے آیا ہے، جہاں ایک نوجوان عورت کی مجبوری کا فائدہ اٹھاکر اس کے ساتھ اجتماعی عصمت دری کی گئی۔ نالا سوپارہ کی رہنے والی 37 سالہ خاتون ویرار مغرب کے گلوبل سٹی علاقے میں کھانا پکانے بنانے کا کام کرتی تھی۔ وہیں اس کی پہچان ایک ایسے نوجوان سے ہوئی جو ایمیزون کمپنی میں پارسل کا کام کرتا تھا۔ نالا سوپارہ مغرب کے علاقے ہنومان نگرمیں دو نوجوانوں نے نوکری کے بہانے اس عورت کی اجتماعی آبروریزی کی۔ متاثرہ خاتون کی شکایت پر پولیس نے مختلف دفعات کے تحت مقدمہ درج کرکے دونوں نوجوانوں کو گرفتارکرلیا ہے۔


اطلاعات کے مطابق، نالا سوپارہ ایسٹ میں رہنے والی 37 سالہ خاتون ویرارمغرب کے گلوبل سٹی ایریا میں کھانا پکاتی تھی۔ وہیں اس کی پہچان ایک نوجوان سے ہوگئی، جو ایمیزون کمپنی میں پارسل دستیاب کرانے کا کام کرتا تھا۔ نوجوان نے خاتون سے کہا کہ وہ اسے اچھی جگہ کام پر لگائے گا۔ عورت اس کی باتوں  میں آگئی۔ فروری 2020 میں نوجوان ویرار گیا اور اپنی اسکوٹی سے اس عورت کو نالاسوپارہ ہنومان نگر لےکرلایا۔


نوجوان عورت کو ایک عمارت کی چوتھی منزل کے فلیٹ پرلےگیا، وہاں پرپہلے سے ہی ایک نوجوان موجود تھا۔ ان دونوں نے خاتون کو دھمکی دی اور اس کے ساتھ اجتماعی عصمت دری کی۔ دونوں نے اس کے ساتھ چار بار زیادتی کی۔ اسی دوران اس نے اس خاتون کا موبائل نمبر اپنے دوسرے ساتھی کو دے دیا۔ اس نے فون پرجسمانی تعلقات قائم کرنےکے لئے خاتون کو پریشان کرنے لگا۔  فی الحال پولیس نے دونوں ملزمین کو گرفتارکرکے بعد تیسرے ملزم کی تلاش شروع کردی ہے۔

Published by: Mirzaghani Baig
First published: Mar 23, 2021 12:00 AM IST