اپنا ضلع منتخب کریں۔

    ملک میں 2021 میں درج کیے گئے ٹی بی کے 21.4 لاکھ نئے کیسیز، گزشتہ سال کے مقابلے 18فیصد زیادہ

    ملک میں 2021 میں درج کیے گئے ٹی بی کے 21.4 لاکھ نئے کیسیز، گزشتہ سال کے مقابلے 18فیصد زیادہ

    ملک میں 2021 میں درج کیے گئے ٹی بی کے 21.4 لاکھ نئے کیسیز، گزشتہ سال کے مقابلے 18فیصد زیادہ

    وزارت نے کہا کہ کامیابی کا کریڈیٹ پروگرام میں سالوں سے لاگو کیے گئے اقدامات کو دیا جاسکتا ہے، جیسے کہ سبھی کیسیز کو حکومت کو مطلع کرنے کے لیے لازمی نوٹیفکیشن پالیسی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi, India
    • Share this:
      ڈبلیو ایچ او کی گلوبل ٹی بی رپورٹ کے مطابق، ہندوستان میں 2021 میں مجموعی طور پر 21.4 لاکھ ٹی بی کے کیسیز کی نشاندہی کی گئی تھی جو 2020 کے مقابلے میں 18 فیصد زیادہ ہیں۔ ملک بھر میں 22 کروڑ سے زیادہ لوگوں نے اس بیماری کی جانچ کرائی ہے۔ مرکزی وزارت صحت نے کہا ہے کہ پردھان منتری ٹی بی مُکت بھارت مہم کے تحت حکومت کی پہل کے تحت 40000 سے زیادہ نیکشئے میتر پورے ملک میں 10.45 لاکھ سے زیادہ ٹی بی مریضوں کی مدد کررہے ہیں۔ عالمی صحت کی تنظیم 27 اکتوبر کو رپورٹ جاری کرچکی تھی اور اس میں پایا گیا ہے کہ دنیا بھر میں ٹی بی کے انسداد، علاج اور بیماری پر کوویڈ-19 وبا کا اثر رہا۔

      رپورٹ پر دھیان دیتے ہوئے مرکزی وزارت صحت نے جمعہ کو دعویٰ کیا کہ ہندوستان نے دیگر ممالک کے مقابلے بہتر مظاہرہ کیا ہے۔ وزارت نے ایک بیان میں کہا کہ سال 2021 کے لیے ہندوستان کی ٹی بی کے معاملے میں 2015 کی بنیاد پر سال کا موازنہ کریں تو فی 1 لاکھ کی آبادی پر 210 ہے، اس میں 18 فیصد کی گراوٹ درج کی گئی ہے جو عالمی اوسط 11 فیصد سے 7 فیصد بہتر ہے۔ یہ اعدادوشمار ہندوستان کو بیماری کی سطح کے معاملے میں بھی 36 ویں مقام پر رکھتے ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں:
      مدھیہ پردیش میں کلورین کے لیک ہونے سےمچا ہنگامہ، یاد آئی 1984 کی خوفناک رات

      یہ بھی پڑھیں:
      دہلی کی آب و ہوا ہوئی 'مزید خراب'، سنگین ہوسکتے ہیں حالات، جانئے کیا کہتا ہے AQI

      کوویڈ-19 وبا نے دنیا بھر میں ٹی بی پروگراموں کو متاثر کیا ہے۔ ہندوستان 2020 اور 2021 میں اہم قدم اٹھا کر بیماری کو دور کرنے کے قابل تھا، جس کی وجہ قومی سطح پر ٹی بی مخالف پروگرام میں 21.4 لاکھ سے زیادہ ٹی بی کے معاملے سامنے آئے اور 18 فیصد زیادہ کیسیز کی اطلاع دی گئی۔ وزارت نے کہا کہ کامیابی کا کریڈیٹ پروگرام میں سالوں سے لاگو کیے گئے اقدامات کو دیا جاسکتا ہے، جیسے کہ سبھی کیسیز کو حکومت کو مطلع کرنے کے لیے لازمی نوٹیفکیشن پالیسی۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: