ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Toolkit Case:ماحولیاتی کارکن دیشاروی کوملی ضمانت،جمع کراناہوگا1لاکھ روپئے کامچلکہ

عدالتی سماعت کے دوران ، دہلی پولیس نے دیشا روی کی ضمانت کی درخواست کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ یہ محض 'ٹول کٹ' نہیں ہے ، اصل منصوبہ یہ تھا کہ ہندوستان کو بدنام کیا جائے اور یہاں بدامنی پیدا ہو۔ دیشا نے واٹس ایپ پر چیٹ ڈیلیٹ کردی ، وہ قانونی کارروائی سے آگاہ تھیں۔ اس سے پتہ چلتا ہے کہ 'ٹول کٹ' کے پیچھے ایک مذموم سازش رچی جارہی تھی

  • Share this:
Toolkit Case:ماحولیاتی کارکن دیشاروی کوملی ضمانت،جمع کراناہوگا1لاکھ روپئے کامچلکہ
'ٹول کٹ کیس' میں گرفتار ماحولیاتی کارکن دیشا روی کو پٹیالہ ہاؤس کورٹ سے ضمانت مل گئی ہے

نئی دہلی. 'ٹول کٹ کیس' (Toolkit Case)میں گرفتار ماحولیاتی کارکن دیشا روی (Disha Ravi) کو پٹیالہ ہاؤس کورٹ سے ضمانت مل گئی ہے۔عدالت نے دیشاروی کو 1لاکھ روپئے کا مچلکہ جمع کرانے کی ہدایت دی ہے۔ سنیچر کو پٹیالہ ہاؤس کورٹ میں دیشا کی ضمانت کی عرضداشت پرسماعت ہوئی تھی۔ دونوں فریقین کے دلائل سننے کے بعد ایڈیشنل سیشن جج دھرمیندر رانا کی عدالت نے منگل تک ضمانت پر فیصلہ محفوظ کرلیا۔عدالتی سماعت کے دوران ، دہلی پولیس نے دیشا روی کی ضمانت کی درخواست کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ یہ محض 'ٹول کٹ' نہیں ہے ، اصل منصوبہ یہ تھا کہ ہندوستان کو بدنام کیا جائے اور یہاں بدامنی پیدا ہو۔ دیشا نے واٹس ایپ پر چیٹ ڈیلیٹ کردی ، وہ قانونی کارروائی سے آگاہ تھیں۔ اس سے پتہ چلتا ہے کہ 'ٹول کٹ' کے پیچھے ایک مذموم سازش رچی جارہی تھی۔



سنیچر کو ہونے والی سماعت میں ، پولیس نے کہا کہ دیشا روی ہندوستان کو بدنام کرنے اور کسانوں کے مظاہروں کی آڑ میں بدامنی پھیلانے کی عالمی سازش کے ہندوستانی باب کا حصہ تھیں۔ دہلی پولیس نے عدالت میں کہا کہ کالعدم تنظیم سکھ فارجسٹس نے 11 جنوری کو انڈیا گیٹ اور لال قلعہ پر خالیستانی پرچم لہرانے پر انعام کا اعلان کیا تھا۔پولیس کے مطابق یہ ٹول کٹ کسی نہ کسی طرح سوشل میڈیا پر لیک ہوگئی۔ یہ عوامی ڈومین میں تلاش میں تھا۔ اسے ختم کرنے کی سازش کی گئی اور مظاہرہ کیا گیا۔
Published by: Mirzaghani Baig
First published: Feb 23, 2021 04:24 PM IST