ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

کرناٹک میں بی جے پی اقلیتی مورچہ کے لیڈروں کیلئے آئے اچھے دن ، ان محکموں میں ملی جگہ

کرناٹک ریاستی وقف بورڈ نے 22 جنوری کو جی او جاری کرتے ہوئے بیک وقت 23 اضلاع کی وقف مشاورتی کمیٹیاں تشکیل دی ہیں ۔ ریاست میں کُل اضلاع کی تعداد 30 ہے ، جن میں 23 اضلاع کی وقف کمیٹیاں تین سالہ معیاد کیلئے بیک وقت تشکیل پائی ہیں ۔

  • Share this:
کرناٹک میں بی جے پی اقلیتی مورچہ کے لیڈروں کیلئے آئے اچھے دن ، ان محکموں میں ملی جگہ
کرناٹک میں بی جے پی اقلیتی مورچہ کے لیڈروں کیلئے آئے اچھے دن ، ان محکموں میں ملی جگہ

کرناٹک میں بی جے پی کے اقتدار میں آنے کے بعد پارٹی کے اقلیتی مورچہ کے لیڈروں کیلئے مانو اچھے دن آگے ہیں ۔ وزارت اقلیتی بہبود، اوقاف اور حج سے جوڑے محکموں میں بی جے پی کے اقلیتی لیڈروں کی بڑے پیمانے پر بھرتی ہورہی ہے۔ ریاستی اقلیتی کمیشن، ریاستی حج کمیٹی کے بعد وقف مشاورتی کمیٹیوں میں بی جے پی اقلیتی لیڈروں، کارکنوں اور حامیوں کی بڑے پیمانے پر نامزدگیاں ہوئی ہیں۔


کرناٹک ریاستی وقف بورڈ نے 22 جنوری کو جی او جاری کرتے ہوئے بیک وقت 23 اضلاع کی وقف مشاورتی کمیٹیاں تشکیل دی ہیں ۔ ریاست میں کُل اضلاع کی تعداد 30 ہے ، جن میں 23 اضلاع کی وقف کمیٹیاں تین سالہ معیاد کیلئے بیک وقت تشکیل پائی ہیں ۔ یہ حکم نامہ محکمہ اقلیتی بہبود کے سکریٹری ابراہیم آڈور کے فیصلہ کے بعد ریاستی وقف بورڈ کے سی ای او اصلاح الدین گدیال نے جاری کیا ہے۔ تمام 23 کمیٹیوں میں بی جے پی کے مسلم لیڈروں اور کارکنوں کو نمائندگی فراہم کی گئی ہے ۔


بی جے پی اقلیتی مورچہ کے ریاستی نائب صدر بی ٹی نذیر پاشاہ کو بنگلورو وقف ایڈوائزری کمیٹی کا چیئرمین نامزد کیا گیا ہے۔ بی ٹی نذیرپاشاہ نے کمیٹی کے دیگر ارکان کے ساتھ اپنےعہدے کو سنبھالا ۔ ضلع وقف افسر فوزیہ کی موجودگی میں نذیر پاشاہ سمیت 21 ارکان نے اپناعہدہ سنبھالا ۔ ان میں تمام ارکان کا تعلق بی جے پی اقلیتی مورچہ سے ہے ۔ اس موقع پر بی ٹی نذیر پاشاہ نے کہا کہ وہ 28 سال سے بی جے پی پارٹی میں ہیں۔ ایک معمولی کارکن سے بی جے پی کے اقلیتی مورچہ کے نائب صدر کے عہدے تک پہنچے ہیں ۔ پارٹی نے میری طویل خدمات کو دیکھتے ہوئے مجھے بنگلورو ضلع وقف مشاورتی کمیٹی کے چیئرمین کے عہدہ پر فائز کیا ہے۔


لچسپ بات یہ ہے کہ 23 وقف مشاورتی کمیٹیاں ٹھیک اُسی دن تشکیل میں آئی ہیں ، جس دن ریاست میں وقف بورڈ قائم ہوا ۔ ڈاکٹر محمد یوسف کی قیادت والے وقف بورڈ میں کانگریس کے نمائندوں کی اکثریت ہے ۔ دیکھنا یہ ہوگا کہ نیا وقف بورڈ اضلاع کی ان کمیٹیوں کو بحال رکھتا ہے یا پھر انہیں برطرف کردیتا ہے۔ ذرائع کے مطابق وقف بورڈ اپنے اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے تمام نئی مشاورتی کمیٹوں کو برطرف کرنے کیلئے کارروائی کررہا ہے ۔ لیکن بنگلورو وقف ایڈوائزی کے چیئرمین بی ٹی نذیر پاشاہ نے کہا کہ اگر وقف بورڈ ایسی کارروائی کرتا ہے تو وہ عدالت سے رجوع ہوں گے ۔

واضح رہے کہ وزیراعلی بی ایس یدی یورپا کی قیادت والی بی جے پی حکومت نے کابینہ میں مسلم نمائندگی کو نظر انداز کیا ہے۔ لیکن پارٹی نے ریاستی اقلیتی کمیشن، اقلیتی ترقیاتی کارپوریشن کیلئے پارٹی کے مسلم لیڈران عبدالعظیم اور مختار پٹھان کوصدر نامزد کیا ہے ۔ حال ہی میں تشکیل دی گئی ریاستی حج کمیٹی میں بھی بی جے پی کے مسلم نمائندوں کی اکثریت ہے۔ لہذا حج کمیٹی کے چیئرمین کا عہدہ بھی بی جے پی کے کسی مسلم لیڈر کوملنے کا قوی امکان ہے ۔ اس طرح کرناٹک میں بی جے پی اقلیتی لیڈروں کے اب اچھے دن آگئے ہیں ۔
First published: Jan 23, 2020 09:46 PM IST