உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Take Care In Summer :۔ 40 پلس ڈگری میں وہ چھ فوڈ، جنہیں کھانے کے بعد آپ کو ہی ہوسکتی ہے پریشانی، سوچ سمجھ کر کھائیں آم

    Take Care In Summer :۔ 40 پلس ڈگری میں وہ چھ فوڈ، جنہیں کھانے کے بعد ہی ہوسکتی ہے پریشانی ۔ علامتی تصویر ۔

    Take Care In Summer :۔ 40 پلس ڈگری میں وہ چھ فوڈ، جنہیں کھانے کے بعد ہی ہوسکتی ہے پریشانی ۔ علامتی تصویر ۔

    Take Care In Summer : یہ سردیوں کا موسم نہیں ہے کہ آپ کا معدہ کسی بھی کھانے کوایڈجسٹ کرلے ۔ ذرا سی لاپروائی پیٹ گیس، پانی کی کمی، نظام انہضام کی خرابی، پیچش، قے، اسہال اور بے چینی جیسے مسائل کا سبب بن سکتی ہے۔

    • Share this:
      Take Care In Summer : گرمیوں میں یوں تو کھانے کی ہی خواہش نہیں ہوتی اور وہیں اگر دل کچھ کھانے کا کرے تو بس مزیدار چیز کی تلاش میں لگا رہتا ہے۔ لیکن خیال رہے کہ یہ سردیوں کا موسم نہیں ہے کہ آپ کا معدہ کسی بھی کھانے کوایڈجسٹ کرلے ۔ ذرا سی لاپروائی پیٹ گیس، پانی کی کمی، نظام انہضام کی خرابی، پیچش، قے، اسہال اور بے چینی جیسے مسائل کا سبب بن سکتی ہے۔ گرمیوں میں درج ذیل چیزیں کھانے سے پرہیز کریں ۔

      مصالحہ پہنچائے گا نقصان

      تیز مصالحے والی کھانے کی اشیاء گرمیوں میں آپ کو نقصان پہنچا سکتی ہیں۔ ادرک، لہسن، دار چینی، تیج پتہ ، کالی مرچ، لال مرچ، زیرہ جیسے مصالحے بہت زیادہ گرمی پیدا کرنے والے ہوتے ہیں۔ یہ مصالحے جسم میں تیزی سے گرمی پیدا کرتے ہیں ، جس کی وجہ سے میٹابولک ریٹ بڑھ جاتا ہے۔ یہ ہمارے نظام ہاضمہ کے لیے نقصان دہ ہوتے ہیں ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : عید پر موسم گرما میں خوبصورت نظر آنے کیلئے اپنائیں یہ Skin Care Tips: ڈاکٹر شیلا اگروال


      نان ویجیٹیرین کھانا کرسکتا ہے بیمار

      اس موسم میں پہلے ہی جسم میں کافی گرمی ہوتی ہے، اس پر نان ویج بھی جسم میں بہت زیادہ گرمی پیدا کرتا ہے۔ اس وجہ سے درجہ حرارت کے 40 ڈگری سے تجاوز کرتے ہی گرم چیزیں کھانے سے گریز کرنا چاہئے۔ مچھلی، چکن، لال گوشت، سی فوڈ نقصان پہنچا سکتی ہیں ۔

      تھوڑا کم کھائیں آم

      آم ایک موسمی پھل ہے ، اس لئے موسم کا کوئی بھی پھل ہمیں نقصان نہیں پہنچاتا۔ لیکن دھیان رکھیں کہ ہم کتنی مقدار میں استعمال کر رہے ہیں۔ موسم گرما آتے ہی لوگ بہت زیادہ آم کھاتے ہیں۔ لیکن خیال رہے کہ آم کی تاثیر گرم ہوتی ہے ۔ یوں آم ایک رس دار پھل ہے اور یہ جسم کو بھی فائدہ پہنچاتا ہے، لیکن اس کی زیادہ مقدار نہ لیں ۔

      کاڑھا نہ پئیں

      کورونا ابھی ختم نہیں ہوا، بہت سے لوگ اب بھی گلے میں ہلکی خراش آنے پر کاڑھا پیتے ہیں۔ کاڑھا زیادہ تر گرم مادوں کے مرکب پر مشتمل ہوتا ہے۔ اس موسم میں کورونا سے ہوشیار رہیں، اگر کوئی پریشانی ہو تو ڈاکٹر سے رابطہ کریں، لیکن خود کا علاج مان کر کاڑھا اس موسم میں آپ کو اور بھی کئی مسائل سے دوچار کر سکتا ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : پیاز گرمیوں کی سپر فوڈ ہے، اسے جیب میں رکھ کر Heatstroke کو کہیں بائے: جانئے اس کے حیرت انگیز فائدے


      چائے اور کافی کم پئیں

      عام ہندوستانیوں کو صبح و شام چائے اور کافی پینے کی عادت ہے۔ لیکن اس موسم میں اس کی مقدار جتنی کم ہوگی اتنا ہی اچھا ہوگا۔ دن میں چائے اور کافی پینے سے پرہیز کریں۔ دراصل چائے اور کافی میں کیفین کی مقدار بہت زیادہ ہوتی ہے۔ گرمی کے موسم میں یہ کیفین جسم کو نقصان پہنچاتی ہے۔ اس سے گیس کی پریشانی لاحق ہوسکتی ہے ۔

       گرم مصالحہ کا استعمال کم کریں

      گرمیوں میں گرم مصالحہ بالکل استعمال نہ کریں تو بہتر رہے گا ۔ اس سے جسم زیادہ گرم ہو جاتا ہے۔ اس سے ہمارے اندرونی اعضاء میں جلن پیدا ہوتی ہے۔ ایک ہی وقت میں یہ جسم میں پتہ کو بھی بڑھا سکتا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: