ایمس نے ارون جیٹلی کی صحت کا بلیٹن جاری کیا، حالت مستحکم، لیکن آئی سی یومیں داخل

سابق وزیرمالیات اوربی جے پی لیڈرارون جیٹلی کے گردے سےمتعلق پریشانیوں اورکچھ انفیکشن کا علاج چل رہا تھا۔

Aug 09, 2019 09:19 PM IST | Updated on: Aug 09, 2019 09:21 PM IST
ایمس نے ارون جیٹلی کی صحت کا بلیٹن جاری کیا، حالت مستحکم، لیکن آئی سی یومیں داخل

سابق وزیر مالیات ارون جیٹلی کی طبیعت خراب ہونے پرایمس میں داخل کرایا گیا۔

سابق وزیرمالیات اوربی جے پی کے لیڈرارون جیٹلی جمعہ کی شام آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنس (ایمس) میں داخل کرائے گئے ہیں۔ ایمس نے ہیلتھ بلیٹن جاری کرکےبتایا ہےکہ ارون جیٹلی کی حالت فی الحال  مستحکم ہے۔ حالانکہ وہ ابھی بھی آئی سی یومیں ہیں۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق انہیں کارڈیک کی شکایت ہونے پرجمعہ کی صبح 11 بجے ایمس میں داخل کرایا گیا۔

وزیراعظم نریندرمودی، بی جے پی کے قومی صدراوروزیرداخلہ امت شاہ بھی جیٹلی سے ملنے کے لئے ایمس پہنچے تھے۔ مودی - شاہ کے علاوہ وزیرصحت ڈاکٹرہرش وردھن، وزیردفاع راجناتھ سنگھ اوراسپیکراوم برلا بھی ایمس پہنچے۔

Loading...

ارون جیٹلی کوگردے سے متعلق پریشانیوں اورانفیکشن کا علاج چل رہا تھا۔ حالانکہ انہوں نے بیماری کی تفصیلی اطلاع نہیں دی تھی۔ ارون جیٹلی کا ستمبر2014 میں بیریٹک آپریشن ہوا تھا۔ طویل وقت سے ذیابیطس کے سبب وزن بڑھنےکی پریشانیوں کے تشخیص کے لئے انہوں نے یہ آپریشن کروایا تھا۔ یہ آپریشن پہلے میکس اسپتال میں ہوا تھا، لیکن بعد میں کچھ پریشانی آنےکے سبب انہیں ایمس منتقل کیا گیا تھا۔ کچھ سال پہلےان کےدل کا بھی آپریشن ہوا تھا۔

Arun-jaitly

جیٹلی نے وزیرعہدے سے کیا تھا انکار

واضح رہے کہ مئی 2019 میں لوک سبھا الیکشن میں بی جے پی کو ملی جیت کے بعد ارون جیٹلی نے وزیراعظم نریندرمودی کوخط لکھ کراپیل کی ہے کہ انہیں وزیربنانے پرغورنہ کیا جائے۔ جیٹلی نے اپنے خط میں لکھا تھا کہ گزشتہ 18 ماہ سے ان کی طبعیت خراب ہے، ایسے میں وہ ذمہ داری کونہیں نبھا پائیں گے۔ اس لئے انہیں وزیربنانے پرکوئی غورنہ کریں۔ اس سال جنوری میں وہ سرجری کےلئےامریکہ گئے تھے۔ ان کےبائیں پیرمیں سافٹ ٹیشو کینسر ہے۔ یہی وجہ رہی کہ وہ مودی حکومت کے پہلے مدت کارکے عبوری بجٹ میں پیش نہیں کر پائے۔ ان کی جگہ ریلوے اورکوئلہ وزیرپیوش گوئل نے بجٹ پیش کیا۔

راجیہ سبھا رکن پارلیمنٹ ہیں جیٹلی

ارون جیٹلی سال 2000 سے راجیہ سبھا کے رکن پارلیمنٹ ہیں۔ گزشتہ سال مارچ میں انہیں اترپردیش سے پھرسے راجیہ سبھا کا پارلیمنٹ منتخب کیا گیا ہے۔ ارون جیٹلی کا 14 مئی 2018 کوکڈنی ٹرانسپلانٹ سے متعلق آپریشن کیا گیا۔ وہ تقریباً 100 دن تک وزیرمالیات سے باہررہے۔ اس دوران ریل اورکوئلہ وزیرپیوش گوئل کو وزیرمالیات کا اضافی چارج دیا گیا۔ 23 اگست 2018 کو وہ وزیرمالیات کے طورپرواپس کام پرلوٹے۔

Loading...