உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دہلی میں اپنی سرکاری رہائش گاہ پر حملہ پر اسد الدین اویسی کا شدید رد عمل ، پانچ گرفتار

    ایم آئی ایم سربراہ اسد الدین اویسی کے بنگلہ میں توڑ پھوڑ ، پولیس نے پانچ لوگوں کو حراست میں لیا

    ایم آئی ایم سربراہ اسد الدین اویسی کے بنگلہ میں توڑ پھوڑ ، پولیس نے پانچ لوگوں کو حراست میں لیا

    کچھ لوگوں نے ان کے نیم پلیٹ ، ٹیوب لائٹس کو نقصان پہنچایا ہے ۔ نئی دہلی کے ڈی سی پی کے مطابق اس معاملہ میں پانچ افراد کو حراست میں لیا گیا ہے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی : آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے صدر اور ممبر پارلیمنٹ اسد الدین اویسی کی دہلی کی سرکاری رہائش گاہ پر توڑپھوڑ کی خبر ہے ۔ غیر سماجی عناصر نے رہائش گاہ کے داخلی دروازے اور باہری کھڑکی کا ایک شیشہ توڑ دیا ۔ ادھر دہلی پولیس نے پانچ ملزمین کو حراست میں لے کر پوچھ گچھ شروع کردی ہے ۔ جس وقت یہ واقعہ پیش آیا ، اس وقت اسد الدین اویسی اپنی سرکاری رہائش گاہ میں نہیں تھے ۔

      ادھر اس واقعہ کے بعد اسد الدین اویسی نے ٹویٹ کیا کہ انتہا پسندغنڈوں نے آج میری دہلی رہائش گاہ میں توڑ پھوڑ کی ۔ ان کی بزدلی مشہور ہے ۔ وہ لوگ ہمیشہ کی طرح اکیلے نہیں بھیڑ میں آئے ۔ انہوں نے ایک ایسے وقت کا انتخاب کیا جب میں گھر پر نہیں تھا۔ وہ لوگ کلہاڑیوں اور لاٹھیوں سے لیس تھے۔ انہوں نے میرے گھر پر پتھر برسائے اور میرے نام کی تختی کو تباہ کر دیا۔



      نئی دہلی ڈی سی پی دیپک یادو نے بتایا کہ ملزمین کے بارے میں پوری جانکاری نکالی جارہی ہے ۔ ایم آئی ایم  کے ریاستی صدر نے کہا کہ اویسی کی سرکاری رہائش گاہ پر حملہ کیا گیا ہے ، یہ قابل مذمت ہے ۔ وہ اس معاملہ کی تھانہ پارلیمنٹ اسٹریٹ میں شکایت درج کرائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن کے دفتر کے پاس ایک ممبر پارلیمنٹ کے گھر پر ایسا حملہ ہوتا ہے تو اس سے واضح ہے کہ دہلی میں لا اینڈ آرڈر کا کیا حال ہے ؟ ان نفرت پھیلانے والوں کے پیھچے کون چھپا ہے ؟


      پولیس ذرائع نے بتایا کہ حملہ کرنے والے دہلی کے منڈولی علاقہ کے رہنے والے ہیں ۔ حملہ کرنے والے شخص کا ویڈیو بھی وائرل ہورہا ہے ۔ اس میں حملہ کرنے والا شخص خود کو للت کمار ہندو سینا کا ریاستی صدر بتا رہا ہے ۔

      میڈیا کو بنگلے کی کیئر ٹیکر دیپا نے بتایا کہ کچھ لوگ نعرے بازی کررہے تھے اور اس کے بعد انہوں نے اینٹوں کو بنگلے کے اندر پھینکا ۔ ادھر پولیس نے بتایا کہ اس واقعہ کی اطلاع پی سی آر کو کسی فون کال کے ذریعہ ملی تھی ۔ پولیس نے فورا جائے واقع پر پہنچ کر جانکاری حاصل کی اور کچھ ملزمین کو پکڑ لیا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: