ہوم » نیوز » وطن نامہ

معروف وکیل اور آل انڈیا مسلم پرسنل بورڈ کے رکن اور ترجمان سید ظفریاب جیلانی کو برین ہیمرج ، میدانتا اسپتال لکھنو میں بھرتی

Zafaryab Jilani Health Update: ظفریاب جیلانی کی طبیعت اچانک بگڑنے کی وجہ سے انہیں میدانتا اسپتال لکھنو کے آئی سی یو میں داخل کرایا گیا ہے ۔ میدانتا اسپتال لکھنو کی سینئر ڈاکٹروں کی ٹیم ان کا علاج کررہی ہے ۔

  • Share this:
معروف وکیل اور آل انڈیا مسلم پرسنل بورڈ کے رکن اور ترجمان سید ظفریاب جیلانی کو برین ہیمرج ، میدانتا اسپتال لکھنو میں بھرتی
معروف وکیل اور آل انڈیا مسلم پرسنل بورڈ کے رکن اور ترجمان سید ظفریاب جیلانی کو برین ہیمرج

لکھنو : ملک کے معروف وکیل اور آل انڈیا مسلم پرسنل بورڈ کے رکن اور ترجمان سید ظفریاب جیلانی کو برین ہیمرج ہوگیا ہے اور لکھنو کے میدانتا اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے ۔  اطلاعات کے مطابق اسلامیہ کالج میں واقع اپنے دفتر کی سیڑھیوں سے سلپ ہونے کے بعد ان کے دماغ میں چوٹ لگنے( برین ہیمرج ) کا خدشہ ہے ۔ Avicenna Hospital میں فرسٹ ایڈ دی گئی اور اس کیلئے ان کو میدانتا اسپتال میں داخل کرایا گیا ۔


میدانتا اسپتال لکھنو کی جانب سے جاری میڈیکل بلیٹن میں بتایا گیا ہے کہ 20 مئی کو شام میں سینئر وکیل اور مسلم پرسنل لا بورڈ کے رکن ظفریاب جیلانی کی طبیعت اچانک بگڑنے کی وجہ سے انہیں میدانتا اسپتال لکھنو کے آئی سی یو میں داخل کرایا گیا ہے ۔ میدانتا اسپتال لکھنو کی سینئر ڈاکٹروں کی ٹیم ان کا علاج کررہی ہے اور ان کی حالت پر نظر رکھے ہوئی ہے ۔



اس سے پہلے ظفریاب جیلانی کے چھوٹے بھائی مسعود جیلانی نے کہا تھا کہ ظفریاب جیلانی ابھی بیہوشی کے عالم میں ہیں ۔ بتادیں کہ لال باغ میں واقع اسلامیہ کالج میں یہ حادثہ پیش آیا ۔

خیال رہے کہ اسلامیہ کالج میں ہی بابری مسجد ایکشن کمیٹی کا دفتر ہے اور وہیں بیٹھ کر وہ روز کام کرتے ہیں ۔ ظفریاب جیلانی بابری مسجد ایکشن کمیٹی کے کنوینر بھی رہے ہیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 20, 2021 07:40 PM IST