اکھلیش کا یوگی حکومت پر حملہ، انکاونٹر کو لے پولیس کے طریقۂ کار پر اٹھائے سوال

لکھنو: اترپردیش کے سابق وزیراعلیٰ اور سماجوادی پارٹی کے قومی صدر اکھلیش یادو نے جمعرات کو ریاست کی بی جے پی حکومت کے طریقۂ کار پر کئی سوال کھڑے کئے۔

May 10, 2018 08:12 PM IST | Updated on: May 10, 2018 08:12 PM IST
اکھلیش کا یوگی حکومت پر حملہ، انکاونٹر کو لے پولیس کے طریقۂ کار پر اٹھائے سوال

گیٹی امیجیز

لکھنو: اترپردیش کے سابق وزیراعلیٰ اور سماجوادی پارٹی کے قومی صدر اکھلیش یادو نے جمعرات کو ریاست کی بی جے پی حکومت کے طریقۂ کار پر کئی سوال کھڑے کئے۔ قانونی نظم ونسق کو لے کر اکھلیش نے کہاکہ پولیس پہلے انکاونٹر کررہی ہے، اس کے بعد اسے انعامی بدمعاش کا اعلان کیا جارہا ہے۔ انہوں نے حکومت سے انعامی بدمعاموشوں کی فہرست جاری کرنے کا مطابلہ بھی کیاہے۔

سماجوادی پارٹی کے قومی صدر نے پولیس کے ذریعہ کئے جارہے انکاونٹر پر سوال اٹھائے۔ فرضی انکائونٹر میں مارے گئے لوگوں کے اہل خانہ کو 50-50 روپئے کا معاوضہ دیئے جانے کا یوگی حکومت سے مطالبہ کیا۔

Loading...

اکھلیش یادو نے لکھنو میں ایک پریس کانفرنس کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پولیس مسلسل عام آدمی کا استحصال کررہی ہے۔ پولیس بی جے پی کے اشاروں پر کام کررہی ہے۔ پولیس کو اپوزیشن کے پیچھے لگا دیاگیا ہے، تاکہ کوئی حکومت کے خلاف آواز نہ اٹھاسکے۔

 

 

اکھلیش نے کہاکہ حکومت کو انعامی بدمعاشوں کی فہرست جاری کرنی چاہئے۔ کیا اب کوئی انصاف کے لئے گہار نہیں لگاسکتا؟ بی جے پی اب انصاف کے لئے بھی لوگوں کو محروم کررہی ہے۔

لکھنو واقع سماجوادی پارٹی کے دفتر میں ہوئی پریس کانفرنس میں اکھلیش نے میرٹھ سے آئے ایک نوجوان کو بھی میڈیا کے سامنے پیش کیا۔ نوجوان نے الزام لگایا کہ اس کے بھائی کو گئوکشی کے الزام میں جیل بھیج دیا گیا۔ جیل بھیجنے سے پہلے پولیس نے اس کی جم کر پٹائی کی، اس وجہ سے 21 اپریل کو ضلع میں ہی اس کی موت ہوگئی۔ اکھلیش یادو نے متاثرہ کے گھر والوں میں سے ایک کو نوکری دینے اور 50 لاکھ روپئے کی مالی مدد دینے کا مطالبہ کیاہے۔

سیتا پور میں کتوں کے حملے میں بچوں کی موت پر اکھلیش یادو نے حکومت کو نشانے پر لیتے ہوئے کہا کہ حکومت کتوں سے بچوں کی جان نہیں بچاپارہی ہے۔ متوفی بچوں کے اہل خانہ کو 10-10 لاکھ روپئے کی مدد دینے کا بھی مطالبہ کیاہے۔

کیرانہ میں انتخابی تشہیر کے لئے جانے کے سوال پر اکھلیش یادو نے کہاکہ پارٹی کے کارکنان اور آرایل ڈی کے ساتھ اتحاد کے سبھی لوگ لگے ہیں۔ 1090 سیو کو ڈائل 100 کے ساتھ ملانے کے فیصلے پر انہوں نے کہاکہ اسے ہم نے "مہیلا ہیلپ لائن" کے ساتھ "مہیلا پاور لائن" بنایا تھا۔

چکگجریا میں ایل ڈی اے کی شان اودھ کمپلیکس کو فروخت کئے جانے پر حکومت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہاکہ ہزاروں کروڑ کے پروجیکٹ کو سستے میں بیچ دیا گیا۔ بی ایس پی حکومت میں چینی ملوں کی فروخت  پر سی بی آئی جانچ کے سوال پر اکھلیش نے کہا کہ جیسے جیسے الیکشن آئے گا، سی بی آئی کی جانچ بھی آئے گی۔ انہوں نے گومتی ریور فرنٹ میں جانچ کے نام پر اسکیم کو روکنے کا الزام بھی سرکار پر عائد کیا۔

 

 

 

 

Loading...