உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ویڈیو کالنگ سے کیا ماں کا انتیم سنسکار، جانیے کیوں بے بس اور لاچار تھی بیٹی

    ویڈیو کالنگ سے کیا ماں کا انتیم سنسکار، جانیے کیوں بے بس اور لاچار تھی بیٹی (علامتی تصویر)

    ویڈیو کالنگ سے کیا ماں کا انتیم سنسکار، جانیے کیوں بے بس اور لاچار تھی بیٹی (علامتی تصویر)

    قسمت کو کچھ اور منظور تھا۔ دراصل، جس بیٹی کی سلامتی کے لیے ماں سینکڑوں کلومیٹر دور آئی تھی، اسی ماں کی موت نے ماں بیٹی کو ہمیشہ کے لیے جدا کردیا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Aligarh, India
    • Share this:
      ماں تو ماں ہوتی ہے، اور ماں سے بڑا بہادر اس دنیا میں کوئی اور نہیں ہوتا۔ ایسا ہم اس لیے کہہ رہے ہیں کہ مغربی بنگال سے ایک بیمار ماں اترپردیش کے علی گڑھ میں پیسہ کمانے کے لیے آئی تھی تا کہ اس کی بیٹی کی صحیح سلامت ڈیلیوری ہوسکے، لیکن قسمت کو کچھ اور منظور تھا۔ دراصل، جس بیٹی کی سلامتی کے لیے ماں سینکڑوں کلومیٹر دور آئی تھی، اسی ماں کی موت نے ماں بیٹی کو ہمیشہ کے لیے جدا کردیا۔ لیکن سپاہی نوین کمار اور مانو اُپکار ادارے کے بانی وشنو کمار بنٹی نے آخری وقت پر بیٹی کو ماں کے دیدار کرادئیے۔

      علی گڑھ کی اس تنظیم کے بانی وشنو کمار بنٹی کے مطابق، سول لائن تھانے کی میڈیکل چوکی کے کانسٹیبل نوین کمار نے فون پر بتایا کہ 16 نومبر کو جے این میڈیکل کالج سے ایک خاتون کی نعش برآمد ہوئی ہے۔ اس خاتون کے پاس سے ایک موبائل فون ملا ہے۔ فون کی بنیاد پر خاتون کی شناخت مغربی بنگال کے شیگھول کُشی جن پد کے کوش ویہار کی رہنے والی بیوہ خاتون بلبلی کے طور پر ہوئی ہیے۔ ان کے شوہر کا نام آنجہانی وپول برمن تھا۔ کانسٹیبل سے بات ہونے کے بعد وشنو کمار بنٹی نے نعش کو نمائش میدان میں واقع مُکتی دھام لانے کے لیے کہا۔ جس کے بعد میڈیکل چوکی کے سپاہی نوین کمار نے اپنے ساتھی ہوم گارڈ کی مدد سے خاتون بلبلی کی نعش لے کر مکتی دھام پہنچ گئے۔

      بیٹی نے ماں کو دی آخری وداعی
      وشنو کمار بنٹی اور سپاہی نوین اس خاتون کی نعش کے انتیم سنسکار کی تیاری کر ہی رہے تھے کہ بلبلی کی حاملہ بیٹی وپلی برمن کا فون آگیا۔ بیٹی کو جب ماں کی موت کے بارے میں پتہ چلا تو رو رو کر اس کا برا حال ہوگیا۔ وشنو کمار نے وپلی برمن اور اس کے شوہر چندن برمن کو علی گڑھ آنے کی بات کہی، جس کے بعد وپلی نے بتایا کہ میں اپنے شوہر چندن کے ستھ اپنی ماں کے گھر پر ہی رہتی ہوں۔ میرا کوئی بھائی یا بہن نہیں ہے اور میں حاملہ ہوں۔ میرے شوہر بھی چھوٹی موٹی مزدوری کرتے ہیں۔ میری ڈیلیوری کے لیے پیسوں کی ضرورت تھی جس کے لیے میری ماں کو ٹھیکیدار ہاشم مزدوری کرانے کے لیے نوئیڈا لے کر گیا تھا۔ اس دوران میری ماں کی موت ہوگئی۔ ساتھ ہی بتایا کہ میرے پاس نہ تو پیسہ ہے اور نہ میری حالت ایسی ہے کہ میں وہاں آکر اپنی ماں کے آخری رسومات انجام دے سکوں۔ ایسے میں آپ سبھی سے درخواست ہے کہ آپ میری ماں کو موبائل پر ہی دکھا دیجیے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      جامع مسجد میں لڑکیوں کے داخلے پر پابندی، ترجمان نے کہا’نامناسب حرکات کرتی ہیں لڑکیاں‘

      یہ بھی پڑھیں:
      200 کروڑروپےکامنی لانڈرنگ کیس: عدالت میں 12 دسمبرکوہوگی سماعت، سوکیش اورجیکولین ہوں گی پیش

      ویڈیو کالنگ سے انجام دی گئیں آخری رسومات
      تب وشنو کمار نے ویڈیو کالنگ کے ذریعے وپلی برمن کو ان کی ماں کے آخری دیدار کرائے اور آخری رسومات بھی دکھائے گئے۔ ایک ماں اور بیٹی کے پیار میں پیسے کی دیوار کو جب سوشل میڈیا کے ذریعے توڑا گیا تو بیٹی بلک بلک کر رونے لگی۔ غور طلب ہے کہ مانو اُپکار سنستھا لاوارث نعشوں کی آخری رسومات انجام دیا کرتی ہے۔ کسی لاوارث نعش کی آخری رسومات انجام دینے کے لیے 9412732100 پر رابطہ کیا جاسکتا ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: