کراس ووٹنگ کے بعد الپیش ٹھاکر نے گجرات اسمبلی سے دیا استعفیٰ، راہل گاندھی پرلگایا دھوکہ دینے کا الزام

الپیش ٹھاکرنےکہا کہ میں نے راہل گاندھی پراعتماد کرکےکانگریس جوائن کی تھی، لیکن بدقستمی کی بات ہے کہ انہوں نے ہمارے لئے کچھ نہیں کیا۔

Jul 05, 2019 05:17 PM IST | Updated on: Jul 05, 2019 06:25 PM IST
کراس ووٹنگ کے بعد الپیش ٹھاکر نے گجرات اسمبلی سے دیا استعفیٰ، راہل گاندھی پرلگایا دھوکہ دینے کا الزام

الپیش ٹھاکر نے راجیہ سبھا الیکشن میں کراس ووٹنگ کے بعد گجرات اسمبلی سے استعفیٰ دیتے ہوئے راہل گاندھی پر دھوکہ دینے کا الزام عائد کیا ہے۔

گجرات میں راجیہ سبھا کی دو سیٹوں کے لئے جمعہ کو ضمنی انتخابات ہورہے ہیں۔ ان الیکشن کے لئے کانگریس نے وہپ جاری کیا ہے۔ وہپ جاری کرنے کے بعد بھی کانگریس کے دو اراکین اسمبلی نے کراس ووٹنگ کردی۔ کانگریس کے سبھی عہدوں سے اسعفیٰ دے چکے باغی رکن اسمبلی الپیش ٹھاکراوردوسرے رکن اسمبلی دھون جھالا نے بی جے پی کے حق میں ووٹنگ کردی۔

یہی نہیں کراس ووٹنگ کے بعد الپیش نے اپنے رکن اسمبلی عہدے سے استعفیٰ دے دیا۔  استعفیٰ دینے کے بعد الپیش ٹھاکرنے کہا کہ میں نے ضمیرکی آواز پرووٹنگ کی اورقومی قیادت کو دھیان میں رکھ کریہ کام کیا۔ انہوں نے کہا کہ جو پارٹی عوامی مینڈیٹ کھوچکی ہے اورجس پارٹی نے ہمارے ساتھ دھوکہ کیا ہے، اس کو مدنظر رکھ کرکیا ہے۔

Loading...

الپیش ٹھاکرنے کہا کہ میں نے راہل گاندھی پراعتماد کرکے کانگریس جوائن کی تھی، لیکن بدقمستی کی بات ہے کہ انہوں نے ہمارے لئے کچھ نہیں کیا۔ ہم بارباربےعزت ہوتے رہے، اس لئے میں نے کانگریس کے رکن اسمبلی کےعہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔

Loading...