உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کورونا انفیکشن کے نئے معاملوں میں اچھال کے بعد مرکز نے 7 ریاستوں کو لکھا خط، دیا یہ حکم

    دہلی، کرناٹک، کیرل، مہاراشٹر، اوڈیشہ، تمل ناڈو اور تلنگانہ کو لکھے گئے ایک خط میں مرکزی وزارت صحت کے سکریٹری راجیش بھوشن نے ان ریاستوں میں آنے والے ہفتوں میں مزید محتاط رہنے کا مشورہ دیا ہے۔ کیونکہ آئندہ تہواروں اور تقاریب سے کورونا وائرس انفیکشن پھیلنے کے امکان میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

    دہلی، کرناٹک، کیرل، مہاراشٹر، اوڈیشہ، تمل ناڈو اور تلنگانہ کو لکھے گئے ایک خط میں مرکزی وزارت صحت کے سکریٹری راجیش بھوشن نے ان ریاستوں میں آنے والے ہفتوں میں مزید محتاط رہنے کا مشورہ دیا ہے۔ کیونکہ آئندہ تہواروں اور تقاریب سے کورونا وائرس انفیکشن پھیلنے کے امکان میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

    دہلی، کرناٹک، کیرل، مہاراشٹر، اوڈیشہ، تمل ناڈو اور تلنگانہ کو لکھے گئے ایک خط میں مرکزی وزارت صحت کے سکریٹری راجیش بھوشن نے ان ریاستوں میں آنے والے ہفتوں میں مزید محتاط رہنے کا مشورہ دیا ہے۔ کیونکہ آئندہ تہواروں اور تقاریب سے کورونا وائرس انفیکشن پھیلنے کے امکان میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: کورونا وائرس انفیکشن کے نئے معاملوں میں اچھال کے درمیان مرکزی وزارت صحت نے 7 ریاستوں کو خط لکھ کر ٹسٹنگ پر توجہ مرکوز کرنے، ٹیکہ کاری کی رفتار بڑھانے اور یہ یقینی بنانے کے لئے کہا ہے کہ کورونا سے متعلق مناسب رویہ اپنائی جانی چاہئے۔

      دہلی، کرناٹک، کیرل، مہاراشٹر، اوڈیشہ، تمل ناڈو اور تلنگانہ کو لکھے گئے ایک خط میں مرکزی وزارت صحت کے سکریٹری راجیش بھوشن نے ان ریاستوں میں  آنے والے ہفتوں میں مزید محتاط رہنے کا مشورہ دیا ہے۔ کیونکہ آئندہ تہواروں اور تقاریب سے کورونا وائرس انفیکشن پھیلنے کے امکان میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

      مرکزی وزارت صحت کے سکریٹری کی طرف سے ریاستوں کو لکھے خط میں کہا گیا ہے، ’بیماری کی علامات میں کچھ تبدیلیوں کے پیش نظر، گائڈ لائن کے مطابق، سبھی طبی سہولیات میں ضلعی سطح پر انفلوئنزا جیسی بیماری اور SARI  معاملوں کی مستقل طور پر نگرانی، رپورٹ، انفیکشن پھیلنے سے ابتدائی وارننگ اور علامات کا پتہ لگانے کے لئے اہم ہے۔ یہ ہمیں تشویش کے کسی بھی حلقے میں ضرورت پڑنے پر کارروائی کرنے کا اہل بنائے گا‘۔ اس درمیان دہلی میں ہفتہ کے روز کورونا وائرس انفیکشن کے 2311 نئے معاملے سامنے آئے۔ ریاست میں کورونا پازیٹیوٹی 13.84 فیصد ریٹ ہے۔

      خط میں کہا گیا ہے، ’دہلی نے گزشتہ ہفتے ہندوستان کے ہفتہ واری نئے معاملوں میں 8.2 فیصد کا تعاون دیا۔ اس درمیان کیرل میں گزشتہ ایک ماہ میں ہر روز اوسطاً 2,347 معاملے اور مہاراشٹر میں 2,135 معاملے درج کئے گئے ہیں۔ بازاروں، بین الریاستی بس اسٹینڈ، اسکولوں، کالجوں، ریلوے اسٹیشنوں وغیرہ جیسی بھیڑ بھاڑ والے مقامات پر کووڈ کے ساتھ مناسب رویہ اپنانے کو یقینی بنانے کے لئے نئے سرے سے توجہ دینے کی ضرورت ہے‘۔

      راجیش بھوشن نے اپنے خط میں کہا ہے کہ بین الاقوامی مسافروں کے  مقررہ نمونوں کی جینوم کی ترتیب کے ساتھ ساتھ لوکل کلسٹرس سے نمونوں کا جمع کرنا ضروری ہے۔ ایسے نمونے ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام ریاستوں کے ذریعہ انساکوگ نیٹ ورک کی نامزد لیبارٹری کو بھیجنا ضروری ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں میں ہندوستان میں 18,738 نئے معاملے درج کئے گئے ہیں۔

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: