ایکسکلوزیو: وزیر داخلہ امت شاہ نے کہا۔ دونوں فریق مانیں گے رام مندر پر سپریم کورٹ کا فیصلہ

وزیر داخلہ نے کہا کہ رام جنم بھومی کا معاملہ 1950 سے چل رہا ہے۔ مجھے لگتا ہے کہ اس کا فیصلہ آنے میں بہت دیر ہو چکی تھی۔ اب فیصلہ آ ہی جانا چاہئے۔

Oct 17, 2019 01:43 PM IST | Updated on: Oct 17, 2019 01:45 PM IST
ایکسکلوزیو: وزیر داخلہ امت شاہ نے کہا۔ دونوں فریق مانیں گے رام مندر پر سپریم کورٹ کا فیصلہ

امت شاہ

نئی دہلی۔  مرکزی وزیر داخلہ اور بھارتیہ جنتا پارٹی کے قومی صدر امت شاہ نے سپریم کورٹ میں ایودھیا کی متنازعہ زمین معاملہ کی سماعت ختم ہونے پر کہا کہ اس سلسلہ میں جلد ہی فیصلہ آ جائے گا۔ نیوز 18 نیٹ ورک کے گروپ ایڈیٹر ان چیف راہل جوشی کو دئیے ایکسکلوزیو انٹرویو میں جب فیصلہ کو لے کر ان کی امید کے بارے میں پوچھا گیا تو انہوں نے کہا ’’ میں مانتا ہوں کہ جو بھی فیصلہ آئے گا اسے دونوں فریق تسلیم کریں گے‘‘۔

بہت دیر ہو چکی ہے، اب ایودھیا پر فیصلہ آنا چاہئے: وزیر داخلہ

Loading...

وزیر داخلہ نے کہا کہ رام جنم بھومی کا معاملہ 1950 سے چل رہا ہے۔ مجھے لگتا ہے کہ اس کا فیصلہ آنے میں بہت دیر ہو چکی تھی۔ اب فیصلہ آ ہی جانا چاہئے۔ تھوڑے وقت میں فیصلہ آ جائے گا۔ اس میں اگر مگر کا سوال ہی نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ چیف جسٹس رنجن گگوئی سمیت ملک کے سینئر ترین ججوں نے اس معاملہ کی سماعت کی ہے۔ لہذا، مجھے یقین ہے کہ سپریم کورٹ جو بھی فیصلہ سنائے گا اسے دونوں فریق قبول کریں گے۔

راہل جوشی کو دئیے ایکسکلوزیو انٹرویو میں جب ان سے پوچھا گیا کہ ایودھیا تنازعہ پر سپریم کورٹ کا فیصلہ آنے کے بعد کیا متھرا اور کاشی جیسے متنازعہ معاملے بھی آگے بڑھائے جائیں گے۔ اس پر وزیر داخلہ نے کہا ’’ مجھے نہیں لگتا ہے کہ کوئی بھی کاشی اور متھرا کے معاملوں پر سوچ رہا ہے۔ حالانکہ، مستقبل کے بارے میں کچھ نہیں کہا جا سکتا ہے۔ فی الحال مجھے امید ہے کہ ایودھیا میں زمین کے متنازعہ معاملہ کا حل سپریم کورٹ کے فیصلے سے ہو جائے گا‘‘۔

Loading...