உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    آسام حکومت اور 8 قبائلی گروپوں کے درمیان ہوا سمجھوتہ، مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے بتایا تاریخی

    آسام حکومت اور 8 قبائلی گروپوں کے درمیان ہوا سمجھوتہ، مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے بتایا تاریخی ۔ تصویر : اے این آئی ۔

    آسام حکومت اور 8 قبائلی گروپوں کے درمیان ہوا سمجھوتہ، مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے بتایا تاریخی ۔ تصویر : اے این آئی ۔

    مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کی موجودگی میں جمعرات کو آسام حکومت اور آٹھ قبائلی گروپوں کے نمائندوں کے درمیان سمجھوتے پر دستخط کئے گئے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Assam | Himachal Pradesh
    • Share this:
      نئی دہلی : مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کی موجودگی میں جمعرات کو آسام حکومت اور آٹھ قبائلی گروپوں کے نمائندوں کے درمیان سمجھوتے پر دستخط کئے گئے ۔ اس دوران امت شاہ نے کہا کہ نریندر مودی کے وزیر اعظم بننے کے بعد نارتھ ایسٹ کو پرسکون اور ترقی یافتہ بنانے کیلئے کئی پروگرام شروع کئے گئے ہیں ۔ آسام سرحد کو لے کر بھی جو تنازعات ہیں ، ہم ان  سبھی کو ختم کرنا چاہتے ہیں ۔ آسام اور نارتھ ایسٹ کی ترقی کرکے اس کو بھی ملک کے دیگر حصوں کی طرح مضبوط کرنا ہے ۔ یہ بات مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے جمعرات کی شام کو آسام ۔ اروناچل پردیش سرحدی تنازع کو لے کر جائزہ میٹنگ کے دوران کہی ۔ انہوں نے کہا کہ 2014 سے ہم نے نارتھ ایسٹ کو مضبوط بنانے کا پروگرام شروع کیا ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: حجاب کیس: سپریم کورٹ نے کہا : تعلیمی اداروں کو ڈریس مقرر کرنے کا اختیار


      جائزہ میٹنگ کے دوران مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے کہا کہ 2014 سے ہم نے نارتھ ایسٹ کو مضبوط کرنے کا پروگرام شروع کیا ہے ۔ نارتھ ایسٹ میں امن ہو، اس کو لے کر بھی ہندوستانی حکومت کام کررہی ہے ۔ گروپ اور ریاستوں کے درمیان میں کافی لڑائی ہوئی ہے، اس کی وجہ سے بہت سے لوگ مارے گئے ہیں، جس میں پولیس والے اور عام لوگ بھی شامل ہیں ۔ اب ہم نے طے کیا ہے کہ آسام سرحد سے وابستہ جو بھی تنازعات ہیں، ان سبھی کو ہم ختم کردینا چاہتے ہیں ۔ نارتھ ایسٹ کی ترقی کرکے اس کو بھی ملک کے دیگر حصوں کی طرح مضبوط کرنا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستانی حکومت نے اس کو لے کر کام کئے ہیں ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: جموں۔کشمیر میں ایک اور دردناک حادثہ، راجوری میں بس کھائی میں گری، 5کی موت، 15 زخمی


      امت شاہ نے کہا کہ آسام کی بوڈو پریشانی کو ہم نے ختم کردیا ہے ۔ سرحد کو لے کر چل رہے تنازع کو 65 فیصد تک ختم کردیا گیا ہے ۔ یہ بڑی حصولیابی ہے ۔ ہم لوگ آسام اور نارتھ ایسٹ کی ترقی کیلئے تیزی سے کام کرنے  میں لگے ہیں ۔ آسام سرکار مل کر یہ سب کام کررہی ہے ۔

      انہوں نے کہا کہ ہم نے آج تک جو بھی سمجھوتے کئے ہیں، اس کے 93 فیصد کام ہم نے پورے کئے ہیں ۔ آسام سے بہت سی جگہوں سے ہم نے افسپا کو ہٹانے کا کام کیا ہے ۔ آسام کی سرکار کے ساتھ مل کر ہم چائے باغات کے سیکٹر میں کام کریں گے ۔ پہلے جو واقعات ہوتے تھے، مودی جی کی سرکار آنے سے ان واقعات میں پہلے سے کمی آئی ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: