உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    By-elections:لوک سبھا کی3اور7اسمبلی سیٹوں کے لئے ضمنی انتخابات کی تاریخ کا اعلان، جانیے کن سیٹوں پر پھر ہوں گے الیکشن

    ان ریاستوں میں ہورہے ہیں ضمنی انتخابات۔

    ان ریاستوں میں ہورہے ہیں ضمنی انتخابات۔

    By-elections: پنجاب میں نئی ​​ریاستی حکومت کے قیام کے تین ماہ اور 13 دن بعد ضمنی انتخابات کے لیے پولنگ 23 جون کو ہوگی۔ ابھی تک کسی پارٹی نے امیدوار کے حوالے سے اپنے کارڈ نہیں کھولے۔

    • Share this:
      By-elections:نئی دہلی: ملک کی چھ ریاستوں میں تین لوک سبھا اور سات اسمبلی سیٹوں کے لیے ضمنی انتخابات 23 جون کو ہوں گے۔ الیکشن کمیشن نے بدھ کو یہ جانکاری دی۔ لوک سبھا کی سیٹیں اعظم گڑھ اور رام پور اتر پردیش میں ہیں جو سماج وادی پارٹی کے لیڈر اکھلیش یادو اور محمد اعظم خان کے بالترتیب اسمبلی انتخابات جیتنے کے بعد خالی ہوئی تھیں۔ ایک لوک سبھا سیٹ پنجاب کے سنگرور سے ہے، جسے بھگونت مان نے ریاست کا وزیر اعلی بننے کے بعد چھوڑ دیا تھا۔

      جن سات اسمبلی سیٹوں پر ضمنی انتخابات ہوں گے، ان میں دہلی کی راجندر نگر سیٹ کو عام آدمی پارٹی کے راگھو چڈھا نے راجیہ سبھا کا رکن بننے کے بعد چھوڑ دیا ہے۔ دیگر اسمبلی سیٹیں جھارکھنڈ میں ماندار، آندھرا پردیش میں اتمکور اور تریپورہ میں اگرتلہ، ٹاؤن بوردووالی، سورما اور جوبراجگنار ہیں۔ ایک بیان میں الیکشن کمیشن نے کہا کہ ووٹوں کی گنتی 26 جون کو ہوگی اور ضمنی انتخابات کا نوٹیفکیشن 30 مئی کو جاری کیا جائے گا۔

      پنجاب میں ایک بار پھر انتخابی بگل بج گیا ہے۔ وزیراعلیٰ بننے کے بعد بھگونت مان کے سنگرور لوک سبھا سیٹ سے استعفیٰ دینے کی وجہ سے یہاں ضمنی انتخاب ہوگا۔ اسمبلی کی طرح اس بار بھی پہلی بار ہوگا جب لوک سبھا کے ضمنی انتخابات کے لیے چار بڑی سیاسی جماعتیں میدان میں ہوں گی، لیکن سب سے بڑا امتحان حکمراں عام آدمی پارٹی کو دینا ہوگا۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Wasim Rizvi عرف جتیندر تیاگی اب لیں گے سنیاس، سناتن دھرم کا پرچار کرنے کی ظاہر کی خواہش

      یہ بھی پڑھیں:

      Nikhat Zareen: ورلڈ باکسنگ چیمپئن بننے کے بعد اولمپک اگلا ہدف! ’بڑھے چلو منزل کی طرف‘


      پنجاب میں نئی ​​ریاستی حکومت کے قیام کے تین ماہ اور 13 دن بعد ضمنی انتخابات کے لیے پولنگ 23 جون کو ہوگی۔ ابھی تک کسی پارٹی نے امیدوار کے حوالے سے اپنے کارڈ نہیں کھولے۔ قابل ذکر ہے کہ وزیر اعلی بھگونت مان نے 2014 اور 2019 میں لگاتار دو بار سنگرور لوک سبھا سیٹ جیتی تھی۔ 2019 میں بھگونت مان واحد امیدوار تھے جنہوں نے لوک سبھا میں عام آدمی پارٹی کی نمائندگی کی۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: