ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

آئی ایم اے گھوٹالہ: سابق ریاستی وزیر روشن بیگ کے بعد ایک اور ملزم کو سی بی آئی نے کیا گرفتار

حلال سرمایہ کاری کے نام پر ہوئے IMA گھوٹالہ میں سابق ریاستی وزیر آر روشن بیگ کی گرفتاری کے بعد سی بی آئی نے معاملہ کے ایک اور ملزم کو گرفتار کیا ہے۔ بنگلورو ڈیولپمننٹ اتھارٹی(BDA) کے افسر پی ڈی کمار کو آج سی بی آئی نے گرفتار کرتے ہوئے کورٹ میں حاضر کیا اور انہیں تین دن کیلئے اپنی تحویل میں لے لیا ہے۔

  • Share this:
آئی ایم اے گھوٹالہ: سابق ریاستی وزیر روشن بیگ کے بعد ایک اور ملزم کو سی بی آئی نے کیا گرفتار
آئی ایم اے گھوٹالہ: سابق ریاستی وزیر روشن بیگ کے بعد ایک اور ملزم کو سی بی آئی نے کیا گرفتار

بنگلورو: حلال سرمایہ کاری کے نام پر ہوئے IMA گھوٹالہ میں سی بی آئی کی تحقیقات میں اب تیزی دکھائی دے رہی ہے۔ کرناٹک کے سابق ریاستی وزیر آر روشن بیگ کے گھر پر آج سی بی آئی نے اچانک چھاپہ مارتے ہوئے بڑے پیمانے پر چھان بین کی کارروائی انجام دی۔ سی بی آئی کا یہ چھاپہ روشن بیگ کی گرفتاری کے ایک دن بعد ہوا ہے۔ بنگلورو کے کولس پارک کے قریب موجود روشن بیگ کی رہائش گاہ پر آج صبح  تقریبا 7:30 بجے دس سے زائد سی بی آئی کے اہلکاروں نے چھاپہ مارا اور کئی گھنٹوں تک گھر کی مکمل تلاشی لی۔  تین منزلہ عمارت کے کونے کونے کی چھان بین کے بعد بینک لاکرس کی بھی تلاشی لینے کی اطلاعات ملی ہیں۔ اس دوران سی بی آئی نے روش بیگ کی اہلیہ اور فرزند سے بھی پوچھ گچج کی ہے۔ تقریباً 8 سے 9 گھنٹوں تک کی  چھان بین کے بعد سی بی آئی کے ہاتھ کیا کچھ لگا، اس کی تفصیلات ابھی  فراہم نہیں کی گئی ہیں۔


اسی دوران سی بی آئی نے معاملہ کے ایک اور ملزم کو گرفتار کیا ہے۔ بنگلورو ڈیولپمننٹ اتھارٹی(BDA) کے افسر پی ڈی کمار کو آج سی بی آئی نے گرفتار کرتے ہوئے کورٹ میں حاضر کیا اور انہیں تین دن کیلئے اپنی تحویل میں لے لیا ہے۔ پی ڈی کمار پر آئی ایم اے کمپنی سے بطور رشوت 5 کروڑ روپئے لینے کا الزام ہے۔ اس سے قبل بھی ایس آئی ٹی نے پی ڈی کمار کو گرفتار کیا تھا۔ ایک اور اہم پیش رفت میں معاملہ کے کلیدی ملزم محمد منصور خان جو کئی مہینوں سے بنگلورو کی سینٹرل جیل پرپن اگرہار میں قید ہیں، عدالت کے سامنے حاضر کرتے ہوئے، سی بی آئی نے تین دنوں کیلئے انہیں بھی اپنی تحویل میں لیا ہے۔

دوسری جانب روشن بیگ کی  گرفتاری کے ایک دن بعد انکے وکیلوں نے آج سی بی آئی کورٹ میں ضمانت کیلئے عرضی داخل کی۔ اس سلسلے میں کورٹ نے سماعت کو 25 نومبر تک کیلئے ملتوی کیا ہے۔ آئی ایم اے گھوٹالہ میں روشن بیگ 36 ویں ملزم قرار پائے ہیں۔ سی بی آئی کی اس کارروائی کے بعد آئی ایم اے کے پریشان حال ڈیپازیٹروں میں اب امید کی کرن جگی ہے۔ ایک جانب  25 نومبر سے آئی ایم اے کے ڈیپازیٹروں کو  claim form بھرتی کرنے کا حکومت نے موقع فراہم کیا ہے تو وہیں روشن بیگ اور دیگر ملزمین کے خلاف کارروائی سے متاثرہ خاندان پر امید دکھائی دے رہے ہیں۔ ان متاثرہ افراد کا کہنا ہے کہ آئی ایم اے گھوٹالہ میں جس کسی نے بھی عوام کا پیسہ ہڑپ لیا ہے اس کے خلاف کارروائی ہونی چاہئے۔ ملزمین کے اثاثہ جات کو ضبط کرتے ہوئے متاثرہ سرمایہ کاروں کو انکی پونجی واپس ملنی چاہئے۔

Published by: Nisar Ahmad
First published: Nov 24, 2020 01:24 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading