ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

مغربی بنگال اسمبلی میں بھی سنائی پڑی سی اے اے اور این آر سی کی مخالفت کی گونج ، ممبران نے اپنایا یہ نیا طریقہ

ریاستی گورنرجگدیپ دھنکر نے اسمبلی میں اپنے خطبے کے آغاز میں ہی سی اے اے و این ار کے خوف سے ہلاک ہوٸے لوگوں کے گھر والوں کے ساتھ تعزیت کی ۔

  • Share this:
مغربی بنگال اسمبلی میں بھی سنائی پڑی سی اے اے اور این آر سی کی مخالفت کی گونج ، ممبران نے اپنایا یہ نیا طریقہ
مغربی بنگال اسمبلی میں بھی سنائی پڑی سی اے اے اور این آر سی کی مخالفت کی گونج

سی اے اے و آین ار سی کے خلاف مغربی بنگال میں احتجاج کا سلسلہ جاری ہے ۔ بنگال اسمبلی میں بھی سی اے اے اور آین ار سی کی مخالفت کی گونج سناٸی دی ۔ ریاستی گورنرجگدیپ دھنکر نے اسمبلی میں اپنے خطبے کے آغاز میں ہی سی اے اے و این ار کے خوف سے ہلاک ہوٸے لوگوں کے گھر والوں کے ساتھ تعزیت کی ۔ وہیں اپنے گہرے دکھ کا بھی اظہار کیا ۔ بنگال میں اب تک این آر سی کے خوف سے ایک درجن سے زاٸد لوگوں کی موت ہوچکی ہے این آر سی کے لٸے اپنے کاغذات ٹھیک کرانے کے لٸے گھنٹوں لاٸن میں کھڑے لوگوں میں کٸی کی موت ہوٸی جبکہ کولکاتہ میں خواتین کے احتجاجی دھرنے میں بھی ایک خاتون کی موت ہوچکی ہے ۔


گورنر نے این آر سی کو لے کر لوگوں میں بڑھتے خوف کو افسوسناک بتایا جبکہ ترنمول کانگریس کے مبران اسمبلی نے این آر سی اور سی اے اے مخالف نعرے لکھے ٹی شرٹ پہن کر اسمبلی اجلاس میں شامل ہوٸے ۔ وزیر اعلی ممتا بنرجی اور ان کی پارٹی ترنمول کانگریس بھی این آر سی اور سی اے اے کے خلاف احتجاج کررہی ہیں ۔


وزیر اعلی ممتا بنرجی سی اے اے اور این آر سی کے خلاف کولکاتہ سمیت ریاست بھر میں احتجاجی ریلی نکال چکی ہیں ۔ اسمبلی میں بھی ترنمول لیڈران نے این آر سی کو ناقابل قبول بتاتے ہوٸے بنگال میں یہ قانون نافذ نہ ہونے کا دعوی کیا ، جبکہ کانگریس و لیفٹ بھی احتجج کررہی ہیں ۔

First published: Feb 08, 2020 10:31 PM IST