ہوم » نیوز » وطن نامہ

زرعی بلوں پر بی جے پی کو گھیرنے کی کوشش میں لگی کانگریس اپنے ہی انتخابی منشور کو لے کر گھر گئی

کانگریس اس وقت کسان حامی نیریٹیو پر کام کررہی ہے ۔ لیکن پہلے اس کے ذریعہ کئے گئے اعلانات ہی مشکل پیدا کررہے ہیں ۔ سنجے جھا جیسے لیڈر اس کو مزید بڑھا رہے ہیں ۔

  • Share this:
زرعی بلوں پر بی جے پی کو گھیرنے کی کوشش میں لگی کانگریس اپنے ہی انتخابی منشور کو لے کر گھر گئی
زرعی بلوں پر بی جے پی کو گھیرنے کی کوشش میں لگی کانگریس اپنے ہی انتخابی منشور کو لے کر گھر گئی

زرعی بل کو لے کر بی جے پی کو گھیرنے کی کوشش میں مصروف کانگریس خود اپنے ہی انتخابی منشور کو لے کر گھر گئی ہے ۔ دراصل جمعرات کو پارلیمنٹ سے پاس ہوئے دو زرعی بلوں کو لے کر مرکزی وزیر ہرسمرت کور بادل کے استعفی کے بعد کانگریس بھی اس معاملہ کو شدت سے اٹھارہی تھی ، لیکن پارٹی اب 2019 لوک سبھا انتخابات کے دوران اپنے منشور میں کئے گئے ایک وعدے کو لے کر گھر گئی ہے ۔


سب سے پہلے کانگریس سے باہر نکالے گئے لیڈر سنجے جھا نے ٹویٹ کرکے پارٹی کو گھیرا ۔ جھا نے ٹویٹ کیا : دوستوں ، 2019 لوک سبھا انتخابات کے منشور میں ہم نے ( کانگریس ) خود اے پی ایم سی ایکٹ ختم کرنے اور زرعی پیدوار کو پابندیوں سے آزاد کرنے کی بات کی تھی ۔ مودی سرکار نے زرعی بل میں کچھ ایسا ہی کیا ہے ۔ اس جگہ پر کانگریس اور بی جے پی کی سوچ ایک جیسی ہے ۔



دراصل ون نیشن ون مارکیٹ کے تصور کیلئے مودی حکومت نے کافی طاقت لگائی ہے ۔ اب نئے زرعی بل کے بعد کسانوں کے مظاہروں پر بھی حکومت کی نگاہ ہے ، لیکن سرکار مان کر چل رہی ہے کہ اس کے پیچھے بہت زیادہ حمایت نہیں ہے ۔ اکالی لیڈر ہرسمرت کور بادل کے استعفی کے باوجود پارٹی کا ماننا ہے کہ پنجاب اور ہریانہ میں یہ بڑا ایشو نہیں بنے گا ۔ پارٹی کی طرف سے کانگریس کو اے ایم پی سی ایکٹ ختم کرنے کی بات بھی یاد دلائی جارہی ہے ۔

حالانکہ ترجمان رندیپ سرجیوالا نے نیوز 18 سے بات چیت میں کہا کہ کانگریس کا منصوبہ الگ تھا ۔ پارٹی کا منصوبہ ڈھیر سارے مارکیٹ اور آوٹ لیٹس بنانے کا تھا ، جس سے کسان کے پاس اپنی پیداوار بیچنے کے کئی متبادل موجود ہوں ۔ موجودہ بل کسانوں کو ایسی چھوٹ نہیں دیتا ہے ۔

لیکن اگر یو پی اے ٹو کی حکومت کی طرف دیکھیں تو پی چدمبرم اور جے رام رمیش جیسے کئی لیڈران فری مارکیٹ کے آئیڈیا کو لے کر کھلے ہوئے تھے ۔ کانگریس کا کہنا ہے کہ کووڈ 19 کے پیش نظر بل کا وقت ٹھیک نہیں ہے اور یہ بل اس وقت کسانوں کی مشکلات مزید بڑھا دے گا ۔ دراصل کانگریس اس وقت کسان حامی نیریٹیو پر کام کررہی ہے ۔ لیکن پہلے اس کے ذریعہ کئے گئے اعلانات ہی مشکل پیدا کررہے ہیں ۔ سنجے جھا جیسے لیڈر اس کو مزید بڑھا رہے ہیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Sep 18, 2020 11:51 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading