ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Corona Vaccine:کورونا ویکسین کی قلت کولیکرمرکزاورریاستی حکومتیں آمنے سامنے، مرکز نےکہاوبا ء پرنہیں ہونی چاہیے سیاست

یہ پہلا موقع نہیں ہے جب مرکز نے یقین دہانی کرائی ہے کہ ملک میں کورونا وائرس ویکسین کا کافی ذخیرہ موجود ہے۔ ہفتے کے روز مرکزی وزارت صحت نے ٹویٹ کیا تھا۔ گذشتہ ماہ راجستھان میں ویکسین کی کمی پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے وزارت نے کہا تھا کہ مرکز نے راجستھان کو ویکسین کی 37.61 لاکھ خوراکیں دی ہیں

  • Share this:
Corona Vaccine:کورونا ویکسین کی قلت کولیکرمرکزاورریاستی حکومتیں آمنے سامنے، مرکز نےکہاوبا ء پرنہیں ہونی چاہیے سیاست
کورونا ویکسین کی قلت کو لیکر مرکز اور ریاستی حکومتیں آمنے سامنے، مرکز نے کہا وبا ء پرنہیں ہونی چاہیے سیاست

ملک کے ماہر ترین ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ ہر شہری تک جلد سے جلد ویکسین کی فراہمی (Rapid vaccination) بھارت میں ک Corona Vaccine:کورونا ویکسین کی قلت کولیکرمرکزاور یاستی حکومتیں آمنے سامنے، مرکز نےکہاوبا ء پرنہیں ہونی چاہیے سیاست ووڈ۔19 میں اضافے سے نکلنے کا واحد راستہ ہے لیکن کیا ہندوستان میں ایسی حالت میں بڑی آبادی کو ٹیکہ لگایا جاسکتا ہے؟ جب کچھ ریاستیں پہلے ہی ویکسین کی کمی کی شکایت کر رہی ہیں۔مرکزی وزیر صحت ہرش وردھن (Harsh Vardhan) نے یقین دہانی کرائی ہے کہ بھارت کے پاس ویکسین کا کافی ذخیرہ ہے اور کسی بھی ریاست کو اس محاذ پر پریشانی کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ ’ویکسین کی قلت کے الزامات سراسر بے بنیاد ہیں‘۔


مہاراشٹرا:


مہاراشٹرا کے وزیر صحت راجیش ٹوپے (Rajesh Tope) کا کہنا ہے کہ ریاست مہاراشٹرا میں صرف تین دن کی ہی ویکسین موجود ہے۔ جب کہ ملک میں کل کیسوں کے مقابلہ میں 56.1 کیس تو صرف مہاراشٹرا میں ہی سامنے آئے رہے ہیں۔ جو کل تعداد کی آدھی سے بھی زائد تعداد ہے۔ مہاراشٹر کو ویکسین کی 1.06 کروڑ خوراکیں موصول ہوئی ہیں۔


اطلاع کے مطابق ریاست میں ویکسین کے خراب ہونے کی شرح تین فیصد ہے۔ جس کی سب سے بڑی وجہ ویکسین کو منفی درجہ حرارت (Cold Storage) میں رکھنے کی نا کافی سہولت ہے۔ یہاں اب تک 85,64,908 افراد کو ویکسین دی جاچکی ہے۔


بدھ کی صبح تک ریاست میں 14 لاکھ خوراکیں موجود تھیں جو مزید 3 دن تک جاری رہیں گی کیونکہ ریاست میں اوسطا 4 لاکھ افراد کو روزانہ ٹیکہ لگایا جارہا ہے۔

بڑھتی ہوئی طلب سے نمٹنے کے لئے ریاست ہر ہفتے 40 لاکھ ویکسین کی خوراک کا مطالبہ کررہی ہے۔ اس نے مرکزی حکومت کی ترسیل کی سست رفتار پر بھی سوال اٹھایا ہے۔ یہاں تک کہ مہاراشٹر کے وزیراعلی ادھو ٹھاکرے نے بھی اس سے پہلے اسی طرح کا مطالبہ کیا تھا۔

کورونا ویکسین کی قلت کو لیکر مرکز اور ریاستی حکومتیں آمنے سامنے، مرکز نے کہا وبا ء پرنہیں ہونی چاہیے سیاست
کورونا ویکسین کی قلت کو لیکر مرکز اور ریاستی حکومتیں آمنے سامنے، مرکز نے کہا وبا ء پرنہیں ہونی چاہیے سیاست


مہاراشٹرا کے وزیراعلی ادھو ٹھاکرے (Uddhav Thackeray) نے وزیراعظم نریندر مودی کو خط لکھ کر ریاست میں کووڈ۔19 میں اضافے کو دیکھتے ہوئے ویکسینیشن کے عمل کو تیز کرنے کے لئے ڈیڑھ کروڑ اضافی ویکسین طلب کرنے کا مطالبہ کیا۔

شہر کے میئر کشوری پیڈنیکر کے مطابق، ممبئی شہر میں صرف ایک دن کی ویکسین ہے۔ انہوں نے کہا کہ ممبئی میں گذشتہ روز کووی شیلڈ کی 1.76 خوراکیں تھیں اور شاید اب یہ ختم ہوچکی ہوگی۔ واضح رہے کہ ممبئی میں سب سے زیادہ کورونا کے کیس سامنے آرہے ہیں، جو کہ ایک پریشان کن صورت حال ہے۔

اس پر وزیر صحت ہرش وردھن کا کہنا ہے کہ ’یہ وبائی بیماری کے پھیلاؤ پر قابو پانے میں مہاراشٹرا کی حکومت کی بار بار کی جانے والی ناکامیوں سے توجہ ہٹانے کی کوشش کے سوا کچھ نہیں ہے‘۔

چھتیس گڑھ:

چھتیس گڑھ میں اس وقت زیادہ کیس سامنے آرہے ہیں۔ جو کہ ملک بھر میں کورونا کیس کے فہرست میں دوسرے نمبر پر ہے۔ جہاں فی الحال کل تعداد کا 6.21 فیصد ہے۔ یہاں روزانہ 2 لاکھ افراد کو ویکسین دی جارہی ہے۔ ریاست میں 5 اپریل کو اسٹاک میں محض 2 لاکھ ویکسین باقی رہی۔ سنگھ دیو کا کہنا ہے کہ سپلائی زیادہ تر غیر یقینی رہی ہے کیونکہ ریاست میں پیر کے روز ویکسین ختم ہوگئی تھی۔

چھتیس گڑھ کے اس الزام پر ہرش وردھن کا کہنا ہے کہ ’بہتر ہوگا اگر ریاستی حکومت چھوٹی سیاست کرنے کی بجائے صحت کے انفراسٹرکچر کو بڑھانے پر اپنی توجہ مرکوز کرے‘۔

آندھرا پردیش:

آندھرا پردیش فوری طور پر ایک کروڑ ویکسین کی خوراک کا مطالبہ کررہا ہے۔ ایک میڈیا رپورٹ کے مطابق ریاست کے پاس اس وقت صرف 3.7 لاکھ خوراکوں کا ذخیرہ ہے جبکہ یہاں روزانہ 1.3 لاکھ افراد کو ٹیکہ دیا جارہا ہے۔

موجودہ کھپت کی شرح کو دیکھیں تو یہ ویکسین صرف مزید تین دن جاری رہ سکتی ہے۔ نیلور اور مغربی گوداوری اضلاع میں پہلے سے ہی کوئی ویکسین نہیں ہے۔

اوڈیشہ:

اوڈیشہ کے ایڈیشنل چیف سکریٹری (ہیلتھ اینڈ فیملی ویلفیئر) پی کے موہپاترا نے مرکز کو ایک خط لکھا ہے جس میں کووی شیلڈ ویکسین کے اضافی 15 سے 20 لاکھ خوراکوں کا مطالبہ کیا گیا ہے کیونکہ اگلے تین دن میں موجودہ اسٹاک ختم ہونے کا خدشہ ہے۔

ریاست تلنگانہ:

ریاست تلنگانہ کا یہ کہنا ہے کہ اس کے پاس ابھی تین دن کی ویکسین باقی ہے اور اس نے مرکز سے مزید ویکسینوں کا مطالبہ کیا ہے۔ ریاست کے وزیر صحت ایٹالہ راجندر کے مطابق یہاں بھی کورونا کیسوں میں آئے دن اضافہ ہی ہورہا ہے۔

یہ پہلا موقع نہیں ہے جب مرکز نے یقین دہانی کرائی ہے کہ ملک میں کورونا وائرس ویکسین کا کافی ذخیرہ موجود ہے۔ ہفتے کے روز مرکزی وزارت صحت نے ٹویٹ کیا تھا۔ گذشتہ ماہ راجستھان میں ویکسین کی کمی پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے وزارت نے کہا تھا کہ مرکز نے راجستھان کو ویکسین کی 37.61 لاکھ خوراکیں دی ہیں لیکن ریاست ویکسینیشن کے لئے صرف 24.28 لاکھ خوراکیں ہی استعمال کر سکتی ہے۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 08, 2021 10:01 AM IST