اویسی بولے۔ ملک میں زندہ ہیں گوڈسے کی اولاد، مجھے مار سکتے ہیں گولی

آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے صدر اور حیدرآباد سے رکن پارلیمنٹ اسدالدین اویسی نے آرٹیکل 370 کو لے کر مرکزی حکومت پر نشانہ سادھا ہے۔

Aug 14, 2019 03:47 PM IST | Updated on: Aug 14, 2019 04:24 PM IST
اویسی بولے۔ ملک میں زندہ ہیں گوڈسے کی اولاد، مجھے مار سکتے ہیں گولی

اسدالدین اویسی: فائل فوٹو

جموں وکشمیر کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے والے آئین کے آرٹیکل 370 کو ہٹانے کے بعد اپوزیشن پارٹیاں مودی حکومت کی تنقید کر رہی ہیں۔ آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے صدر اور حیدرآباد سے رکن پارلیمنٹ اسدالدین اویسی نے آرٹیکل 370 کو لے کر مرکزی حکومت پر نشانہ سادھا۔

اویسی نے کہا کہ جس طرح سے کشمیر میں کرفیو اور پابندی لگائی گئی ہے ، اس سے حالات بہت خراب ہو گئے ہیں۔ مجلس اتحاد المسلمین کے صدر نے کہا کہ ’’ مجھے یقین ہے کہ ایک دن مجھے بھی گولی مار دی جائے گی۔ ملک میں گوڈسے کی اولاد ایسا کر سکتی ہیں‘‘۔

Loading...

اویسی نے نیوز ایجنسی اے این آئی سے بات چیت میں یہ بیان دیا۔ انہوں نے کہا ’’ کشمیر میں اس وقت ایمرجنسی جیسے حالات ہیں۔ وہاں نہ تو فون چالو ہیں اور نہ ہی لوگوں کو باہر نکلنے کی آزادی دی جا رہی ہے۔ وزیر اعظم مودی کو آئینی عمل کے تحت فیصلہ لینا چاہئے اور وہاں سے کرفیو ہٹایا جانا چاہئے‘‘۔

انہوں نے کہا کہ میں ناگالینڈ، میزورم، منی پور، آسام اور ہماچل پردیش کے لوگوں سے کہتا ہوں کہ ان کے ساتھ بھی ایسا ہی ہو سکتا ہے جو کشمیر کے ساتھ ہوا ہے۔

 

Loading...