ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

دوائی لے کر آرہی گاڑیوں کی آمدورفت میں رخنہ اندازی کر رہا ہے آسام: میزورم کا دعویٰ

Assam Mizoram Border Tension: میزورم - آسام سرحد پر 26 جولائی کو ہوئے جدوجہد میں آسام پولیس کے 6 جوانوں سمیت 7 لوگوں کی موت ہوگئی تھی، جبکہ کئی دیگر زخمی ہوگئے تھے۔

  • Share this:
دوائی لے کر آرہی گاڑیوں کی آمدورفت میں رخنہ اندازی کر رہا ہے آسام: میزورم کا دعویٰ
آسام میڈیکل سپلائی لے کر آرہی گاڑیوں کی آمدورفت میں رخنہ اندازی کر رہا ہے آسام: میزورم کا دعویٰ

آئیجول: میزورم کے وزیر صحت آر لال تھانلیانا نے اتوار کو دعویٰ کیا کہ سرحدی تنازعہ کے بعد براک گھاٹی میں چلائے جارہی ناکہ بندی مہم کے ذریعہ آسام، میزورم کے لئے آنے والے کووڈ-19 جانچ کٹ سمیت دیگر طبی سپلائی میں رخنہ اندازی کر رہا ہے۔ آسام نے حالانکہ کہا کہ ریاست میں کوئی بھی تنظیم فی الحال کسی طرح کی ناکہ بندی نہیں کر رہا ہے۔ میزورم فی الحال کووڈ-19 کی دوسری لہر سے جدوجہد کر رہا ہے اور وہ ملک کے کچھ سب سے متاثرہ ریاستوں میں سے ایک ہے۔ لال تھانلیانا نے الزام لگایا کہ آسام کے کچھار ضلع میں قومی شاہراہ-306 پر جانچ کٹ اور دواوں جیسی کووڈ-19 متعلقہ طبی اشیا لے کر آرہی گاڑیاں پھنسی ہوئی ہیں۔


لال تھانلیانا نے ’پی ٹی آئی- بھاشا‘ کو بتایا، ’ہماری اطلاع کے مطابق، آسام میں ریاست منصوبہ بند اقتصادی ناکہ بنی کی گئی ہے۔ اشیائے ضروریہ اور زندگی بچانے والی دواوں کی کھیپ لے کر آرہی گاڑیاں آسام کے دھولائی-لیلا پور علاقے میں پھنسے ہوئے ہیں۔ ہم گاڑیوں کی آمدورفت دوبارہ شروع کرانے کے لئے ایک بار پھر مرکزی حکومت سے رابطہ کریں گے۔




میزورم - آسام سرحد پر 26 جولائی کو ہوئے مسلح افواج کے درمیان ہوئے جدوجہد میں آسام پولیس کے 6 جوانوں سمیت سات لوگوں کی موت ہوگئی تھی، جبکہ کئی دیگر زخمی ہوگئے تھے۔
میزورم - آسام سرحد پر 26 جولائی کو ہوئے مسلح افواج کے درمیان ہوئے جدوجہد میں آسام پولیس کے 6 جوانوں سمیت سات لوگوں کی موت ہوگئی تھی، جبکہ کئی دیگر زخمی ہوگئے تھے۔


میزورم - آسام سرحد پر 26 جولائی کو ہوئے مسلح افواج کے درمیان ہوئے جدوجہد میں آسام پولیس کے 6 جوانوں سمیت سات لوگوں کی موت ہوگئی تھی، جبکہ کئی دیگر زخمی ہوگئے تھے۔ اس درمیان، میزورم کے چیف سکریٹری لالنونموائی چوانگو نے کہا کہ ریاستی حکومت کو مرکز پر مکمل بھروسہ ہے اور ہم وزارت داخلہ کو ایک اور خط بھیجیں گے اور آسام سے گاڑیوں کی آمدورفت فوری طور پر شروع کرانے کے لئے مداخلت کرنے کا مطالبہ کریں گے۔

چیف سکریٹری کے مطابق، چاروں طرف سے زمین سے گھرے میزورم میں 95 فیصد ضروری اشیا کی فراہمی آسام کے راستے قومی شاہر-360 کے ذریعہ ہوتی ہے، جو ریاست کا جیون ریکھا ہے۔ میزورم کے محکمہ داخلہ نے 28 جولائی اور 30 جولائی کے درمیان تین دنوں میں مرکزی وزارت داخلہ کو دو بار خط لکھ کر براک گھاٹی کے لوگوں کے ذریعہ مبینہ طور پر کی گئی اقتصادی ناکہ بندی کو ہٹانے اور آسام میں مبینہ طور پر شرپسند عناصر کے ذریعہ ریلوے لائن کو تین مقامات پر کئے گئے نقصان کو درست کرانے کی گزارش کی ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Aug 01, 2021 11:59 PM IST