اپنا ضلع منتخب کریں۔

    گجرات : امت شاہ نے اے اے پی کو لے کر کیا بڑا دعوی، انتخابی نتائج سے پہلے بتائی من کی بات

    گجرات : امت شاہ نے اے اے پی کو لے کر کیا بڑا دعوی، انتخابی نتائج سے پہلے بتائی من کی بات  (File Photo)

    گجرات : امت شاہ نے اے اے پی کو لے کر کیا بڑا دعوی، انتخابی نتائج سے پہلے بتائی من کی بات (File Photo)

    Gujarat Assembly Elections 2022: مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے گجرات اسمبلی انتخابات میں عام آدمی پارٹی کے چیلنج کو توجہ نہیں دیتے ہوئے دعوی کیا کہ اروند کیجریوال کی قیادت والی عام آدمی پارٹی شاید اپنا کھاتہ بھی نہیں کھول پائے گی ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Ahmadabad | Gujarat
    • Share this:
      احمد آباد : مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے گجرات اسمبلی انتخابات میں عام آدمی پارٹی کے چیلنج کو توجہ نہیں دیتے ہوئے دعوی کیا کہ اروند کیجریوال کی قیادت والی عام آدمی پارٹی شاید اپنا کھاتہ بھی نہیں کھول پائے گی ۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کی ریاستی یونٹ کے ذریعہ اینٹی ریڈیکلائزیشن سیل قائم کرنے کا اعلان ایک اچھی پہل ہے، جس پر مرکزی حکومت اور دیگر ریاستیں غور کرسکتی ہیں ۔

      پی ٹی آئی ۔ بھاشا کے ساتھ انٹرویو میں شاہ نے وزیر اعظم نریندر مودی کی مقبولیت، ریاست کے وزیر اعلی کے طور پر ان کی مدت کار کے دوران گجرات کی ترقی اور زیرو اپیزمنٹ پالیسی کو لاگو کئے جانے کے قدم کو پچھلے 27 سالوں میں لوگوں کے ذریعہ بار بار بی جے پی پر بھروسہ ظاہر کرنے کی اہم وجہ بتائی ۔ انہوں نے کہا کہ گجرات میں بی جے پی بے مثال جیت درج کرے گی ۔ لوگوں کو ہماری پارٹی اور ہمارے وزیر اعظم نریندر مودی پر پورا بھروسہ ہے ۔

      یہ بھی پڑھئے: 11 قصورواروں کی وقت سے پہلے رہائی کیوں؟ بلقیس بانو نے کھٹکھٹایا سپریم کورٹ کا دروازہ


      یہ بھی پڑھئے: پولی گراف ٹیسٹ میں آفتاب نے قبول کی قتل کی بات، بولا: افسوس نہیں


      گجرات اسبملی انتخابات میں اے اے پی کی دستک کے سوال پر شاہ نے کہا کہ ہر پارٹی کو الیکشن لڑنے کا حق ہے، لیکن یہ لوگوں پر منحصر ہے کہ وہ پارٹی کو قبول کرتے ہیں یا نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ گجرات کے لوگوں کے دماغ میں اے اے پی کہیں نہیں ٹھہرتی ہے ۔ انتخابی نتائج کا انتظار کیجئے ، شاید اے اے پی امیدواروں کا نام کامیاب امیدواروں کی فہرست میں آئے ہی نہیں ۔

      کانگریس گجرات میں بی جے پی کی اہم حریف پارٹی رہی ہے جبکہ دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کی قیادت والی اے اے پی نے مودی کی آبائی ریاست میں ایک جارحانہ تشہیری مہم چلائی ہے ۔ کانگریس سے مل رہے چیلنج پر شاہ نے کہا کہ کانگریس اب بھی اہم اپوزیشن پارٹی ہے، لیکن وہ قومی سطح پر بحران کے دور سے گزر رہی ہے اور اس کا اثر گجرات میں بھی نظر آرہا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: