ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

یوپی اسمبلی انتخابات: اسدالدین اویسی کے ساتھ اتحاد کرسکتے ہیں شیو پال یادو، اکھلیش سے ساتھ آگے کی اپیل

Azamgarh News: اسدالدین اویسی کے ساتھ میٹنگ کے بعد پی ایس پی کے قومی صدر شیوپال یادو نے کہا کہ بی جے پی کو اکھاڑ پھینکنے کے لئے سماجوادی پریوار کو متحد ہونے کی ضرورت ہے۔

  • Share this:
یوپی اسمبلی انتخابات: اسدالدین اویسی کے ساتھ اتحاد کرسکتے ہیں شیو پال یادو، اکھلیش سے ساتھ آگے کی اپیل
یوپی اسمبلی انتخابات: اسدالدین اویسی کے ساتھ اتحاد کرسکتے ہیں شیو پال یادو

اعظم گڑھ: ملک کے کئی ریاستوں کے اسمبلی انتخابات (UP Assembly Election 2022) میں سیاسی پارٹیوں کے حالات کو خراب کرنے والی آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین (AIMIM) کے قومی صدر اسدالدین اویسی (Asaduddin Owaisi) اتحاد کی زمین تیار کر رہے ہیں۔ اسی ضمن میں ہفتہ کو انہوں نے پرگتی شیل سماجوادی پارٹی لوہیا (PSP) کے سربراہ شیو پال یادو (Shivpal Yadav) سے ملاقات کی۔ ملاقات کے بعد شیو پال یادو نے اشارہ دیا کہ آئندہ اسمبلی انتخابات ان کی پارٹی اسدالدین اویسی کی پارٹی کے ساتھ اتحاد کرکے لڑے گی۔


دراصل، ہفتہ کو آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین (اے آئی ایم آئی ایم) کے ریاستی صدر شوکت علی کی بیٹی کی شادی میں شرکت کرنے پہنچے اسدالدین اویسی کی شیوپال یادو کے ساتھ لمبی میٹنگ ہوئی۔ اس دوران پی ایس پی کے قومی صدر شیو پال سنگھ یادو نے کہا کہ بی جے پی کو اکھاڑ پھینکنے کے لئے سماجوادی فیملی کو متحد ہونے کی ضرورت ہے۔ شیو پال یادو نے اشارہ دیا کہ آئندہ اسمبلی انتخابات ان کی پارٹی اسدالدین اویسی کی پارٹی کے ساتھ اتحاد کرکے لڑے گی۔


یوپی اسمبلی انتخابات: اسدالدین اویسی کے ساتھ اتحاد کرسکتے ہیں شیو پال یادو
یوپی اسمبلی انتخابات: اسدالدین اویسی کے ساتھ اتحاد کرسکتے ہیں شیو پال یادو


اکھلیش سے بھی ساتھ آنے کی اپیل

ہفتہ کو دیر شام اعظم گڑھ ضلع کے ماہول قصبہ میں پہنچے پی ایس پی کے قومی صدر شیوپال یادو اور اسدالدین اویسی، اے آئی ایم آئی ایم کے ریاستی صدر شوکت علی کی بیٹی کی شادی میں شریک ہوئے۔ اس دوران دونوں لیڈروں کے درمیان ملاقات بھی ہوئی۔ شیو پال سنگھ یادو نے کہا کہ وہ شادی تقریب میں آئے ہیں، لیکن ان کی اے آئی ایم آئی ایم صدر اسدالدین اویسی کے ساتھ میٹنگ ہوئی ہے۔ وہ پہلے ہی کہہ چکے ہیں کہ ایک جیسی نظریہ اور سبھی سیکولر طاقتوں کے لوگ ملک اور ریاست سے بی جے پی کی حکومت کو اکھاڑ پھینکنے کا کام کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ سال 2022 الیکشن میں بی جے پی کو ہرانے کے لئے سماجوادی پریوار کو متحد ہونے کی ضرورت ہے۔ انہوں نےکہا کہ وہ سماجوادی پارٹی کے صدر اکھلیش یادو سے بھی کہہ چکے ہیں کہ سب کو اکٹھا کریں۔ اس میں ہم کو بھی ساتھ لیں، لیکن وہ اپنی پارٹی کا انضمام کسی بھی صورت میں سماجوادی پارٹی میں نہیں کریں گے، بلکہ اتحاد کریں گے‘۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Feb 21, 2021 10:56 AM IST