بپن راوت نے کہا۔ پاکستان نے بالاكوٹ کیمپ پھر شروع کیا، دراندازی کی فراق میں ہیں 500 دہشت گرد

جنرل راوت نے پاکستان کو سخت انتباہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہندوستانی فوجیں سرحد پر مستعدی سے ڈٹی ہوئی ہیں اور وہ بالاكوٹ سے آگے بھی جا سکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کم از کم 500 دہشت گرد پاکستان مقبوضہ کشمیر سے جموں كشمير میں دراندازی کرنے کی فراق میں ہیں۔

Sep 23, 2019 03:21 PM IST | Updated on: Sep 23, 2019 03:26 PM IST
بپن راوت نے کہا۔ پاکستان نے بالاكوٹ کیمپ پھر شروع کیا، دراندازی کی فراق میں ہیں 500 دہشت گرد

فوج کے سربراہ جنرل بپن راوت

چنئی۔ فوج کے سربراہ جنرل بپن راوت نے پیر کو کہا کہ پاکستان نے بالاكوٹ دہشت گرانہ کیمپ کو حال ہی میں دوبارہ شروع کر دیا ہے اور سرحد پار سے تقریباً 500 درانداز ملک میں داخل ہونےکی فراق میں ہیں۔ یہاں افسر ٹریننگ اکیڈمی میں نامہ نگاروں سے بات چیت میں جنرل راوت نے کہا’’بالاكوٹ کو پاکستان نے حال ہی میں دوبارہ شروع کر دیا ہے، اس سے پتہ چلتا ہے کہ بالاكوٹ پر اثر پڑا تھا، اسے تباہ کر دیا گیا تھا‘‘۔

قابل غور ہے کہ 14 فروری کو پلوامہ میں مرکزی ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر خود کش دہشت گردانہ حملہ کے بعد فضائیہ نے 27 فروری کو ایئر اسٹرائیک میں بالاكوٹ میں واقع دہشت گردوں کے کیمپ کو تباہ کر دیا تھا۔

جنرل راوت نے پاکستان کو سخت انتباہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہندوستانی فوجیں سرحد پر مستعدی سے ڈٹی ہوئی ہیں اور وہ بالاكوٹ سے آگے بھی جا سکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کم از کم 500 دہشت گرد پاکستان مقبوضہ کشمیر سے جموں كشمير میں دراندازی کرنے کی فراق میں ہیں۔

Loading...