உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Barabanki Road Accident:بارابنکی میں بس اور ٹرک کی ٹکر، 13افراد ہلاک ، متعدد زخمی

    Youtube Video

    پولیس ذرائع نے بتایا کہ دہلی سے بہرائچ جانے والی ڈبل ڈیکر بس دیوا کے علاقے بابوریہ گاؤں کے قریب کسان شاہراہ پر مخالف سمت سے آنے والے ٹرک سے ٹکرا گئی۔ اس حادثے میں 13 افراد کی موت اور کئی زخمی ہوگئے۔ زخمیوں کو بارابنکی اور لکھنؤ کے ٹراما سینٹرز میں بھیجا گیا ہے۔ مرنے والوں کی تعداد بڑھ سکتی ہے۔

    • Share this:
      اتر پردیش کے ضلع بارابانکی کے دیوا علاقے میں آج صبح سویرے ایک بس اور ٹرک کے درمیان زبردست ٹکر میں کم از کم نو افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے۔پولیس ذرائع نے بتایا کہ دہلی سے بہرائچ جانے والی ڈبل ڈیکر بس دیوا کے علاقے بابوریہ گاؤں کے قریب کسان شاہراہ پر مخالف سمت سے آنے والے ٹرک سے ٹکرا گئی۔ اس حادثے میں 13 افراد کی موت اور کئی زخمی ہوگئے۔ زخمیوں کو بارابنکی اور لکھنؤ کے ٹراما سینٹرز میں بھیجا گیا ہے۔ مرنے والوں کی تعداد بڑھ سکتی ہے۔انہوں نے بتایا کہ اطلاع ملنے پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر راحت اور بچاؤ مہم شروع کی۔

      9 افراد موقع پر ہی دم توڑ گئے۔

      بتایا جا رہا ہے کہ ایک سیاحتی بس دہلی سے بہرائچ جا رہی تھی۔ پھر سامنے سے ایک ٹرک آیا۔ ٹرک ریت سے لدا ہوا تھا۔ اسی وقت بس میں تقریباً 70افراد سفر کر رہے تھے۔ ٹرک اوربس کے درمیان تصادم اتنا شدید تھا کہ 9 افراد موقع پر ہی دم توڑ گئے۔ابتدائی جانکاری کے مطابق ، جمعرات کی صبح تقریباًساڑھے پانچ بجے ، جیسے ہی دہلی سے بہرائچ جانے والی سیاحتی بس دیوا کوتوالی علاقے میں کسان راہ پر بابوری گاؤں کے قریب پہنچی ، سامنے سے آنے والا ٹرک اچانک بے قابو ہوگیا اور اس سے ٹکرا گیا۔ اس کے ساتھ. زخمیوں کو بس اور ٹرک کو کاٹ کر نکالا جا رہا ہے۔ تمام زخمیوں کو ڈسٹرکٹ ہسپتال بھیجا گیا جہاں ڈاکٹروں نے۹افراد کو مردہ قرار دیا ہے۔ مرنے والوں میں رحمان (42) ولد نظام الدین ساکن علا پور بارابنکی کے علاوہ ابھی تک کسی اور مسافر کی شناخت نہیں ہوسکی ہے



       

      بس اور ٹرک کو جے سی بی کے ذریعے الگ کیاگیا ہے۔پولیس نے بتایا کہ اس حادثے میں 27 افراد زخمی ہوئے ہیں۔ ان میں سے بہت سے لوگ شدید زخمی بھی ہیں۔ زخمیوں کو علاج کے لیے لکھنؤ ٹراما سینٹر میں داخل کرایا گیا ہے۔


      حادثے کی اطلاع ملتے ہی پولیس نے موقع پر پہنچ کر امدادی کام شروع کیا۔تصادم اتنا شدید تھا کہ بس اور ٹرک دونوں اڑ گئے۔ بس کا اگلا حصہ اور بس مکمل طور پر ردی بن گئی ہے۔ پولیس اب اس خطرناک حادثہ کی وجوہات کا پتہ لگانے کی کوشش کررہی ہے۔
      Published by:Mirzaghani Baig
      First published: