உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Dharam Sansad Hate Speech: 'دھرم سنسد' میں نفرت آمیز تقریر پر دہلی پولیس نے درج کیا کیس، سپریم کورٹ نے لگائی تھی پھٹکار

     Dharam Sansad Hate Speech: 'دھرم سنسد' میں نفرت آمیز تقریر پر دہلی پولیس نے درج کیا کیس، سپریم کورٹ نے لگائی تھی پھٹکار

    Dharam Sansad Hate Speech: 'دھرم سنسد' میں نفرت آمیز تقریر پر دہلی پولیس نے درج کیا کیس، سپریم کورٹ نے لگائی تھی پھٹکار

    Dharam Sansad Hate Speech: دہلی پولیس نے سپریم کورٹ کی پھٹکار کے بعد اب دہلی دھرم سنسد کو لے کر نازیبا تقریر کا معاملہ درج کیا ہے ۔ پولیس نے ہفتہ کو نیا حلف نامہ داخل کرکے عدالت عظمی کو اس کی جانکاری دی ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : دہلی پولیس نے سپریم کورٹ کی پھٹکار کے بعد اب دہلی دھرم سنسد کو لے کر نازیبا تقریر کا معاملہ درج کیا ہے ۔ پولیس نے ہفتہ کو نیا حلف نامہ داخل کرکے عدالت عظمی کو اس کی جانکاری دی ۔ اس سے پہلے گزشتہ 22 اپریل کو سپریم کوٹ نے دہلی پولیس کے اس حلف نامہ پر ناخوشی ظاہر کی تھی ، جس میں کہا گیا تھا کہ پچھلے سال یہاں منعقدہ پروگرام کے دوران کوئی نفرت آمیز تقریر نہیں کی گئی تھی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : پاکستانی ISI اور خالصتان کا پانچ لاکھ روپے میں ایک دھماکہ کا منصوبہ ناکام، جانئے پوری تفصیل


       

      یہ بھی پڑھئے : 'آپ وائناڈ سے بھی الیکشن ہاریں گے'، AIMIM چیف اسد الدین اویسی کا راہل گاندھی کو چیلنج، اس سیٹ سے آزماو اپنی قسمت


      دہلی پولیس نے عدالت عظمی کو بتایا تھا کہ پچھلے سال 19 دسمبر کو دائیں بازو کے گروپ ہندو یووا واہنی کے ذریعہ یہاں منعقدہ ایک پروگرام میں کسی کمیونٹی کے خلاف کوئی مخصوص الفاظ نہیں بولے گئے تھے ۔ اب اپنے نئے حلف ناموں میں پولیس نے کہا کہ مواد کی جانچ کے بعد معاملہ درج کرلیا گیا ہے اور قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی ۔ پولیس نے کہا کہ شکایت کے سبھی لنک اور پبلک ڈومین میں دستیاب دیگر مواد کا تجزیہ کیا گیا اور یوٹیوب پر ایک ویڈیو ملا ۔

      مواد کی تصدیق کے بعد چار مئی کو اوکھلا انڈسٹریل علاقہ پولیس اسٹیشن میں آئی پی سی کی دفعہ 153 اے ، 295 اے ، 298 اور 34 کے تحت جرائم کیلئے معاملہ درج کیا گیا تھا ۔ سبھی الزامات مذہبی دشمنی کو فروغ دینے سے متعلق ہیں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: