ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بیجا پورنکسلی حملہ: سینئرافسران کے ساتھ وزیرداخلہ امت شاہ کی اعلیٰ سطحی میٹنگ کے بعد شہید جوانوں سے متعلق کہی یہ بڑی بات

مرکزی وزیر امت شاہ نے آج کہا کہ چھتیس گڑھ کے بیجا پور میں نکسلیوں کے ساتھ مڈبھیڑ میں شہید ہوئے پولیس ملازمین کی قربانی ضائع نہیں جائےگی اور نکسلیوں کے خلاف لڑائی کو اس کے انجام تک لے جایا جائےگا۔

  • UNI
  • Last Updated: Apr 04, 2021 10:20 PM IST
  • Share this:
بیجا پورنکسلی حملہ: سینئرافسران کے ساتھ وزیرداخلہ امت شاہ کی اعلیٰ سطحی میٹنگ کے بعد شہید جوانوں سے متعلق کہی یہ بڑی بات
بیجا پورنکسلی حملہ: سینئرافسران کے ساتھ وزیرداخلہ امت شاہ کی اعلیٰ سطحی میٹنگ کے بعد شہید جوانوں سے متعلق کہی یہ بڑی بات

نئی دہلی: مرکزی وزیر امت شاہ نے آج کہا کہ چھتیس گڑھ کے بیجا پور میں نکسلیوں کے ساتھ مڈبھیڑ میں شہید ہوئے پولیس ملازمین کی قربانی ضائع نہیں جائےگی اور نکسلیوں کے خلاف لڑائی کو اس کے انجام تک لے جایا جائےگا۔ امت شاہ نے اتوار کو ایک بیان میں کہا،’’جہاں تک اعدادو شمار کا سوال ہے میں کچھ کہنا نہیں چاہتا کیونکہ ابھی سرچ آپریشن چل رہا ہے،دونوں طرف کا نقصان ہوا ہے۔ میں شہید جوانوں کو خراج عقیدت پیش کرتا ہوں اور ان کے گھروالوں اور ملک کو یقین دلانا چاہتا ہوں کہ ان جوانوں نے جو خون بہایا ہے وہ ضائع نہیں جائے گا اور ہماری لڑائی اور مضبوطی کے ساتھ جاری رہے گی اور اسے نتیجہ تک لے جایا جائےگا۔‘‘

واضح رہے کہ چھتیس گڑھ کے بیجاپور ضلع میں پولیس اور نکسلیوں کے درمیان ہفتے کو تقریباً چار گھنٹے چلی مڈبھیڑ کے بعد اتوار کو شہید جوانوں کی تعداد پانچ سے بڑھکر 24 ہوگئی اور 31 جوان زخمی ہیں۔


پولیس ذرائع نے مڈبھیڑ کے بعد تازہ اطلاعات کے حوالے سے کہا کہ 24 جوان شہید ہوئے ہیں، وہیں 31 جوانوں کے زخمی ہونے کی تصدیق ہوئی ہے، جن میں سے تقریباً ایک درجن کو علاج کےلئے دارالحکومت رائے پور بھیج دیا گیا ہے۔ باقی کا علاج یہیں پر اسپتال میں چل رہا ہے ۔ زخمی جوانوں میں بھی کچھ ہی حالت کافی نازک بنی ہوئی ہے۔


پولیس کا خیال ہے کہ کچھ نکسلیوں کے بھی مارے جانے کا خدشہ ہے،جن کی لاش نکسلیوں کے قبضے میں ہی ہے۔ اس دوران مسٹر شاہ اپنا انتخابی دورہ بیچ میں ہی چھوڑ کر دارالحکومت دہلی آرہے ہیں جہاں وہ ایک اعلی سطحی میٹنگ میں حالات کا جائزہ اور آگے کی حاکمت عملی پر بحث کریں گے۔
انہوں نے چھتیس گڑھ کے وزیراعلی کے ساتھ بات کر کے انہیں مرکز کی جانب سے ہر ممکن ممد کی یقین دہانی کی ہے ۔ساتھ ہی سینٹرل ریزرو فورس کے ڈائریکٹر جنرل کو چھتیس گڑھ جاکر حالات کا جائزہ لینے کو کہا ہے۔ اس دوران نکسلیوں کو دبوچنے کےلئے وسیع تلاشی مہم چلائی جارہی ہے۔ موصول اطلاعات کے مطابق بیجا پور کے جنگل میں پہاڑیوں سے گھرے علاقے میں سیکڑوں کی تعداد میں نکسلیوں نے پولیس کی مشترکہ گشتی ٹیم پر حملہ کیا۔ گشتی ٹیم میں بھی سیکڑوں جوان شامل تھے۔ بتایا گیا ہے کہ نکسلی پہاڑوں سے حملہ کررہے تھے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Apr 04, 2021 10:20 PM IST