مشن 2019:'کانگریس کا لشکر طیبہ سے کیا رشتہ'،جموں ریلی میں امت شاہ نے اپوزیشن پر کیا وار

جموں ۔ کشمیر میں بھارتیہ جنتا پارٹی اور ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کی دوستی ٹوٹنے اور محبوبہ حکومت گرنے کے بعد امت شاہ پہلی مرتبہ جموں پہنچے۔

Jun 23, 2018 09:21 PM IST | Updated on: Jun 23, 2018 09:25 PM IST
مشن 2019:'کانگریس کا لشکر طیبہ سے کیا رشتہ'،جموں ریلی میں امت شاہ نے اپوزیشن پر کیا وار

بی جے پی صدر امت شاہ : فائل فوٹو

جموں ۔ کشمیر میں بھارتیہ جنتا پارٹی اور ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کی دوستی ٹوٹنے اور محبوبہ حکومت گرنے کے بعد امت شاہ پہلی مرتبہ جموں پہنچے۔سنیچر کو انہوں نے جموں بی جے پی کی ایک ریلی کو خطاب کیا۔اس دوران شاہ نے کانگریس پر جم کر نشانہ لگایا۔کشمیر میں بی جے پی کے پی ڈی پی سے حمایت واپس لینے کا ذکر کرتے ہوئے امت شاہ نے سوال کیا، "کانگریس بتائے کہ ان کی پارٹی اور لشکر میں کیا تعلق ہیں؟ کیونکہ ،کانگریس لیڈر غلام نبی آزاد کا بیان آتے ہی لشکر طیبہ نے اس کی حمایت کر دی"۔

امت شاہ بی جے پی کے بانی صدر شیام پرساد مکھرجی کے بلیدان دوس کے موقع پر آج جموں پہنچے ہیں۔انہوں نے آگے کہا کہ راہل گاندھی میں اگر ہمت ہے تو وہ اپنے لیڈران سے سوال پوچھیں ۔کشمیر میں حالات ایسے ہوئے کہ امن بحالی نہیں ہو پائی اور جوان اورنگزیب صحافی شجاعت بخاری کا قتل کر دیا گیا،ترقی کا توازن محبوبہ حکومت میں بگڑ گیا اور جموں ۔لداخ سے کشمیر سمجھوتہ نہیں کرے گا۔

Loading...

کشمیر میں 4 دہشت گردوں کے پیچھے مارے جاتے ہین 20 شہری :غلام نبی آزاد

بتادیں کہ کانگریس لیڈر غلام نبی آزاد نے حال ہی میں کہا تھا کہ مرکزی حکومت کی نفرت بھری پالیسی کا سب سے زیادہ نقصان سب سے زیادہ نوصان عام عوام کو بھگتنا پڑتا ہے۔انہوں نے کہا کہ کشمیر میں 4 دہشت گردوں کو مارنے کیلئے 20 سویلیئنس کو مار دیا جاتا ہے۔آزاد کے اس بیان کا دہشت گرد تنظیم لشکر طیبہ نے حمایت کی تھی۔ؤ

Loading...