بی جے پی رکن پارلیمنٹ نے مسلم نوجوانوں کوگلا کاٹنےکی دھمکی دے دی

 دھمکی دینے کے سبب رکن پارلیمنٹ کے خلاف پولیس میں شکایت کی گئی ہے۔ یہ شکایت کانگریس اقلیتی سیل کے ضلع صدرساجد خان نے کی ہے۔

Jun 24, 2019 05:46 PM IST | Updated on: Jun 24, 2019 05:46 PM IST
بی جے پی رکن پارلیمنٹ نے مسلم نوجوانوں کوگلا کاٹنےکی دھمکی دے دی

بی جے پی رکن پارلیمنٹ سویم باپو راو: فائل فوٹو

بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ سویم باپوراو نے مسلم نوجوانوں کا گلا کاٹنے کی دھمکی دی ہے۔ ان کا الزام ہےکہ مسلم نوجوان آدیواسی خواتین کا استحصال کررہے ہیں۔ سویم باپو تلنگانہ کےعادل آباد سے رکن پارلیمنٹ ہیں۔ دھمکی دینےکے سبب رکن پارلیمنٹ کے خلاف پولیس میں شکایت کی گئی ہے۔ یہ شکایت کانگریس اقلیتی سیل کے ضلع صدرساجد خان نے کی ہے۔

ساجد خان نے سویم باپوکواپنا بیان واپس لینے کے لئےکہا ہے۔ انہوں نےکہا ہے کہ رکن پارلیمنٹ ہونے کے باوجود اقلیتوں کے خلاف غلط الزام لگا رہے ہیں، انہیں فوراً اپنے الفاظ واپس لینے چاہئے۔ حالانکہ ابھی تک کانگریس لیڈرکےمطالبے کا رکن پارلیمنٹ پرکوئی اثر نہیں ہوا ہےاورنہ ہی پارٹی کی طرف سے ابھی تک کوئی بیان سامنےآیا ہے، لیکن اب یہ معاملہ میڈیا میں پہنچ گیا ہے۔

Loading...

اسی سال بی جے پی میں ہوئے شامل

واضح رہےکہ سویم باپوراواسی سال مارچ میں بی جے پی میں شامل ہوئے تھے۔ باپوراو سال 2004 میں ٹی آرایس کے ٹکٹ پررکن اسمبلی بنے تھے۔ بعد میں وہ کانگریس میں شامل ہوگئےتھے۔ سال 2018 کےاسمبلی الیکشن میں وہ ہارگئےتھے۔ اس کے بعد انہوں نے کانگریس سےلوک سبھا الیکشن میں ٹکٹ کا مطالبہ کیا تھا، لیکن کانگریس نےعادل آباد سے رمیش راٹھورکوٹکٹ دے دیا۔ اس کے بعد وہ بی جے پی میں شامل ہوگئے۔ بعد میں انہوں نے عادل آباد سے بی جے پی کے ٹکٹ پرجیت درج کی تھی۔ وہیں بی جے پی کا الزام ہے کہ تلنگانہ میں بی جے پی لیڈروں کومسلسل نشانہ بنایا جارہا ہے۔

Loading...