ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

بی جے پی نے کہا- عمر عبداللہ کے کہنے پر نہیں بحال ہوگا جموں وکشمیر کا ریاستی درجہ

بی جے پی جموں و کشمیر یونٹ کے ترجمان بریگیڈیئر (ر) انیل گپتا نے کہا ہے کہ نیشنل کانفرنس کے نائب صدر عمر عبداللہ کا بیان کوئی معنی نہیں رکھتا ہے کیونکہ اس یونین ٹریٹری میں ابھی انتخابات ہونے کے کوئی امکانات نہیں ہیں۔

  • Share this:
بی جے پی نے کہا- عمر عبداللہ کے کہنے پر نہیں بحال ہوگا جموں وکشمیر کا ریاستی درجہ
بی جے پی نے کہا- عمر عبداللہ کے کہنے پر جموں وکشمیر کا ریاستی درجہ بحال نہیں کیا جائے گا۔

جموں: بی جے پی جموں و کشمیر یونٹ کے ترجمان بریگیڈیئر (ر) انیل گپتا نے کہا ہےکہ نیشنل کانفرنس کے نائب صدر عمر عبداللہ کا بیان کوئی معنی نہیں رکھتا ہے کیونکہ اس یونین ٹریٹری میں ابھی انتخابات ہونے کے کوئی امکانات نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر کا ریاستی درجہ عمر عبداللہ جیسے لیڈران کے کہنے پر بحال نہیں کیا جائے گا۔ انیل گپتا نے پیر کے روز اپنے ایک ویڈیو بیان میں کہا: 'عمر عبداللہ کا بیان کوئی معنی نہیں رکھتا ہے کیونکہ سرکار نے واضح کر رکھا ہے کہ ابھی یہاں انتخابات ہونے کے کوئی امکانات نہیں ہیں'۔


بی جے پی جموں و کشمیر یونٹ کے ترجمان بریگیڈیئر (ر) انیل گپتا کا کہنا تھا: 'ان کی بیان بازی سے صاف ظاہر ہےکہ یہ اپنے آپ کو سیاسی طور پر زندہ رکھنا چاہتے ہیں۔
بی جے پی جموں و کشمیر یونٹ کے ترجمان بریگیڈیئر (ر) انیل گپتا کا کہنا تھا: 'ان کی بیان بازی سے صاف ظاہر ہےکہ یہ اپنے آپ کو سیاسی طور پر زندہ رکھنا چاہتے ہیں۔


انہوں نے کہا: 'جہاں تک ریاستی درجے کی بحالی کا تعلق ہے وزیر اعظم اور وزیر داخلہ نے صاف کیا ہے کہ یہ تب ہی ہوگا، جب یونین ٹریٹری کے اندر امن بحال ہوجائے گا، معمول کی زندگی لوٹ آئے گی اور ترقی کا عمل شروع ہوگا۔ یہ غلام نبی آزاد، محبوبہ مفتی اور عمر عبداللہ کے کہنے پر نہیں ہوگا'۔ بی جے پی ترجمان کا مزید کہنا تھا: 'ان کی بیان بازی سے صاف ظاہر ہےکہ یہ اپنے آپ کو سیاسی طور پر زندہ رکھنا چاہتے ہیں۔ ان کو ڈر لگ گیا ہےکہ لوگ ان کی بات نہیں سن رہے ہیں۔ لوگ اب ان کو مانتے نہیں ہیں۔ نہ نو من تیل ہوگا نہ رادھا ناچے گی'۔

قابل ذکر ہے کہ عمر عبداللہ نے انگریزی روزنامہ ’انڈین ایکسپریس’ میں شائع اپنے ایک مضمون میں کہا ہے کہ 'جب تک جموں و کشمیر یونین ٹریٹری رہے گی میں تب تک انتخابات میں حصہ لینے سے باز رہوں گا'۔ انہوں نے مضموں میں لکھا ہے کہ میں اُس ایوان کا حصہ نہیں بن سکتا ہوں جس کے اختیارات چھینے گئے ہوں۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jul 27, 2020 08:31 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading