உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    BJP-Shiv Sena Alliance: سیاست: کانگریس کو ہرانے کے لئے بی جے پی سے مل گئی شیو سینا، جانئے کیا ہے معاملہ

    کانگریس کو ہرانے کے لئے بی جے پی سے مل گئی شیو سینا، جانئے کیا ہے معاملہ

    کانگریس کو ہرانے کے لئے بی جے پی سے مل گئی شیو سینا، جانئے کیا ہے معاملہ

    مہاراشٹر میں مہا وکاس اگھاڑی (MVA) حکومت کو شیو سینا (Shiva Sena) چلا رہی ہے۔ نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (NCP) اور کانگریس (Congress) اسے حمایت دے رہی ہیں، لیکن اورنگ آباد (Aurangabad) میں اسی شیو سینا نے اپوزیشن بھارتیہ جنتا پارٹی (BJP) سے ہاتھ ملایا، تاکہ کانگریس کو ہرایا جاسکے۔

    • Share this:
      ممبئی: مہاراشٹر میں غضب کی سیاست چل رہی ہے۔ یہاں ریاست کی مہا وکاس اگھاڑی (MVA) حکومت کو شیو سینا (Shiva Sena) چلا رہی ہے۔ نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (NCP) اور کانگریس (Congress) اسے حمایت دے رہی ہیں، لیکن اورنگ آباد (Aurangabad) میں اسی شیو سینا نے اپوزیشن بھارتیہ جنتا پارٹی (BJP) سے ہاتھ ملایا، تاکہ کانگریس کو ہرایا جاسکے۔

      معاملہ اورنگ آباد کی دودھ پروڈیوسر سوسائٹی (Milk Producer’s Society of Aurangabad) کے الیکشن کا ہے۔ اپنے آپ انتہائی مشہور سمجھی جانے والی اس کمیٹی کی 14 سیٹوں کے لئے اسی اتوار کو انتخابات ہوئے ہیں۔ ان میں سے 6 سیٹیں جس پینل نے جیتی ہیں، اسے بی جے پی کے ساتھ ساتھ شیو سینا کی  بھی حمایت حاصل ہے۔ اس کے بعد کمیٹی کے صدر عہدے پر ہری بھاو باگڑے کی تاجپوشی طے ہوگئی ہے۔ ہری بھاو باگڑے بی جے پی (BJP) کے لیڈر ہیں۔ اس سے قبل وہ مہاراشٹر اسمبلی کے صدر رہ چکے ہیں۔

      ہری بھاو باگڑے نے خود بھی الیکشن لڑا تھا۔ انہیں بھی قریبی حریف سریش پٹھاڑے کے 65 ووٹوں کے مقابلے میں 275 ووٹوں سے جیت حاصل ہوئی ہے۔ ‘دی ٹائمس آف انڈیا‘ کے مطابق، کانگریس حامی امیدواروں کو ان الیکشن میں پٹخنی دینے کے لئے باگڑے کی قیادت والے پینل کو شیو سینا (Shiva Sena) کے رکن اسمبلی عبدالستار نے بھی حمایت دی ہے۔ عبدالستار ریاست کی حکومت میں وزیر بھی ہیں۔

      یہاں دو متضاد، لیکن دلچسپ چیزوں کو بھی یاد کیا جاسکتا ہے۔ پہلا- عبدالستار کا بیان، جو انہوں نے گزشتہ دنوں دیا تھا۔ اس میں انہوں نے اشارہ دیا تھا کہ مہاراشٹر میں شیو سینا اور بی جے پی پھر ساتھ آسکتی ہیں۔ دوسرا- شیو سینا سربراہ ادھو ٹھاکرے کا بیان، جو انہوں نے اسی اتوار کو دیا ہے۔ شیو سینا کے بانی بال ٹھاکرے کی جینتی (Shiva Sena Founder Bal Thackeray) پر منعقدہ پروگرام میں ادھو ٹھاکرے (Uddhav Thackeray) نے شیو سینکوں کو خطاب کرتے ہوئے کہا تھا، ’بی جے پی (BJP) کی پالیسی۔ ’اتحادیوں کا استعمال کرو اور چھوڑ دو‘ والی ہے۔ شیو سینا نے اس کے ساتھ اتحاد کرکے اپنے 25 سال برباد کردیئے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: