ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

بی جے پی نے آرٹیکل 370 پر فاروق عبداللہ کے بیان کو ملک مخالف قرار دیا

بی جے پی نے آج جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی اور نیشنل کانفرنس این سی کے صدر فاروق عبد اللہ کے بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر فاروق عبداللہ کا بیان اور کانگریس لیڈر راہل گاندھی کے بیانات ایک ہی سکے کے دو پہلو ہیں اور دونوں لیڈر بے شرمی سے ملک کو بدنام کرنے اور ملک دشمن سرگرمیوں میں مصروف ہیں۔

  • UNI
  • Last Updated: Oct 13, 2020 01:09 AM IST
  • Share this:
بی جے پی نے آرٹیکل 370 پر فاروق عبداللہ کے بیان کو ملک مخالف قرار دیا
بی جے پی نے آرٹیکل 370 پر فاروق عبداللہ کے بیان کو ملک مخالف قرار دیا-فائل فوٹو

نئی دہلی: بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے آج جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی اور نیشنل کانفرنس (این سی) کے صدر فاروق عبد اللہ کے بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر فاروق عبداللہ کا بیان اور کانگریس لیڈر راہل گاندھی کے بیانات ایک ہی سکے کے دو پہلو ہیں اور دونوں لیڈر بے شرمی سے ملک کو بدنام کرنے اور ملک دشمن سرگرمیوں میں مصروف ہیں۔ بی جے پی کے ترجمان ڈاکٹر سمبت پاترا نے یہاں پارٹی کے مرکزی دفتر میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر فاروق عبد اللہ کے ملک مخالف بیان پران پر حملہ کیا اور کہا کہ وہ ملک کو بدنام کرنے اور قوم کے خلاف کام کرنے میں مصروف ہیں۔


بی جے پی نے آج جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی اور نیشنل کانفرنس این سی کے صدر فاروق عبد اللہ کے بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر فاروق عبداللہ کا بیان اور کانگریس لیڈر راہل گاندھی کے بیانات ایک ہی سکے کے دو پہلو ہیں اور دونوں لیڈر بے شرمی سے ملک کو بدنام کرنے اور ملک دشمن سرگرمیوں میں مصروف ہیں۔
بی جے پی نے آج جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی اور نیشنل کانفرنس این سی کے صدر فاروق عبد اللہ کے بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر فاروق عبداللہ کا بیان اور کانگریس لیڈر راہل گاندھی کے بیانات ایک ہی سکے کے دو پہلو ہیں اور دونوں لیڈر بے شرمی سے ملک کو بدنام کرنے اور ملک دشمن سرگرمیوں میں مصروف ہیں۔


انہوں نے کہا ’’نیشنل کانفرنس کے صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ کا بیان ملک دشمن ہے۔ راہل گاندھی اور ڈاکٹر فاروق عبداللہ کے درمیان زیادہ فرق نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایک طرف ڈاکٹر فاروق عبد اللہ اپنے انٹرویو میں چین کے توسیع پسندانہ ذہنیت کوصحیح ٹھہراتے ہیں۔ دوسری جانب وہ ملک مخالف بیان دیتے ہیں کہ اگر ہمیں مستقبل میں موقع ملا تو ہم چین کے ساتھ مل کر آرٹیکل 370 کو واپس لائیں گے۔ ان کا ماننا ہے کہ اگر آج چین جارح ہواہے تو اس کی ایک ہی وجہ ہے کہ دفعہ 370 کو ہندوستان نے ہٹایا۔



بی جے پی کے ترجمان نے کہا کہ ڈاکٹر فاروق عبداللہ کا یہ بیان نہ صرف تشویشناک ہے بلکہ افسوسناک بھی ہے۔ ہندوستان ایسی ذہنیت کے حامل لوگوں کو کبھی معاف نہیں کرے گا۔ ایسا نہیں ہے کہ صرف ڈاکٹر فاروق عبداللہ ہی یہ کہتے ہیں۔ اگر آپ تاریخ پر نظر ڈالیں اور راہل گاندھی کے حالیہ بیانات کو سنتے ہیں تو آپ کو معلوم ہوگا کہ یہ دونوں ایک ہی سکے کے دو رخ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ فاروق عبداللہ مسلسل ملک دشمن بیانات دے رہے ہیں۔ واضح رہے کہ ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے اتوار کو ایک انٹرویو میں کہا کہ انہیں امید ہے کہ چین کی حمایت سے جموں وکشمیر میں پھر سے دفعہ 370 نافذ کی جائے گی۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Oct 13, 2020 01:09 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading