ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

بابائے قوم مہاتما گاندھی کے یوم شہادت پر رانچی کے شاہین باغ میں خون عطیہ کیمپ کا انعقاد

رانچی کے شاہین باغ کی خواتین کے ذریعہ منعقدہ اس کیمپ میں درجنوں لوگوں نے خون عطیہ کیا اور ہندو ۔ مسلم اتحاد کو پائیدار بنانے کا پیغام دیا ۔

  • Share this:
بابائے قوم مہاتما گاندھی کے یوم شہادت پر رانچی کے شاہین باغ میں خون عطیہ کیمپ کا انعقاد
بابائے قوم مہاتما گاندھی کے یوم شہادت پر رانچی کے شاہین باغ میں خون عطیہ کیمپ کا انعقاد

بابائے قوم آنجہانی مہاتما گاندھی کے یوم شہادت کے موقع پر رانچی کے کڈرو واقع عیدگاہ میدان میں خون عطیہ کیمپ کا انعقاد کیا گیا ۔ رانچی کے شاہین باغ کی خواتین کے ذریعہ منعقدہ اس کیمپ میں درجنوں لوگوں نے خون عطیہ کیا اور ہندو ۔ مسلم اتحاد کو پائیدار بنانے کا پیغام دیا ۔ اس موقع پر مختلف سماجی کارکنان کے ذریعہ پھل ، جوس اور کھانے پینے کی دیگر اشیا کا انتظام کیا گیا۔


واضح رہے کہ رانچی کے کڈرو واقع حج ہاوس کے سامنے گذشتہ 20 جنوری سے احتجاجی دھرنا جاری ہے ۔ سی اے اے ، این  آر سی اور این پی آر کے خلاف دہلی کے شاہین باغ کے طرز پر منعقدہ اس دھرنے میں کثیر تعداد میں خواتین شرکت کر رہی ہیں اور اس قانون کو واپس لینے کا مطالبہ کر رہی ہیں ۔ اسی ضمن میں بابائے قوم مہاتما گاندھی کے یوم شہادت کے پیش نظر شاہین باغ کے روبرو عیدگاہ میدان میں خون عطیہ کیمپ کا انعقاد کیا گیا ۔ اس کیمپ کے انعقاد میں مختلف سماجی کارکنان نے اپنے سطح سے تعاون پیش کیا ۔


خاص طور سے انجمن اسلامیہ کے صدر حاجی ابرار احمد اپنے معاون ساتھیوں کے ساتھ موقع پر موجود رہے اور لوگوں کو خون کا عطیہ دینے کے تعلق سے حوصلہ بڑھاتے رہے ۔ وہیں سماجی کارکن توحید عالم ، مطیع الرحمان ، محمد شاہد  و دیگر افراد اپنے خون کا عطیہ کرنے والوں کی خدمت میں پیش پیش نظر آئے ۔ اس موقع پر سماجی کارکن محمد شاہد نے کہا کہ وہ لوگ مہاتما گاندھی کے شیدائی ہیں اور ان کے پیغامات کو نئی نسل سے روشناس کرانا چاہتے ہیں ۔


محمد شاہد کہتے ہیں کہ ملک کی خاطر مہاتما گاندھی کی قربانی کو فراموش نہیں کیا جاسکتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ گاندھی کی قربانی کو یوں ہی ضائع نہیں کرنا چاہتے ہیں ۔ محمد شاہد نے کہا کہ نئے انقلاب کے لئے نئی نسل ملک کے لئے خون دینے کے لئے تیار ہے ۔ وہیں خون عطیہ کرنے والے محمد نیر پرویز عرف ڈائمنڈ نے کہا کہ مہاتما گاندھی آج کے دن شہید ہوئے ، اس لئے وہ اپنے خون کا عطیہ دے کر بیحد خوش ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ملک کو مذہبی بنیاد پر بانٹنے کی کوشش ہو رہی ہے ، لیکن وہ چاہتے ہیں کہ ان کے خون سے کسی بھی مذہب و فرقہ کے لوگوں کا بھلا ہو جائے ۔

انہوں نے کہا کہ ملک کی خوبصورتی اسی میں ہے کہ ملک میں قومی یکجہتی کو پروان چڑھایا جائے ۔ اس خون عطیہ کیمپ میں رانچی صدر اسپتال کے جونیئر ڈاکٹر کے ساتھ ساتھ انجمن اسلامیہ اسپتال کے ڈاکٹر اور منتظمین بھی موجود رہے ۔ خون عطیہ دینے والوں کو جھارکھنڈ ایڈس کنٹرول کمیٹی کے رکن اتول گیرا کے ذریعہ سرٹیفیکیٹ بھی فراہم کیا گیا ۔ اس موقع پر درجنوں خواتین نے بھی خون کا عطیہ کیا ۔
First published: Jan 30, 2020 10:18 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading