اپنا ضلع منتخب کریں۔

    Salman Khan:سلمان خان کوقتل کرنےکےلیےخریدی تھی 4لاکھ کی رائفل،گینگسٹر لارنس بشنوئی نےکیادعویٰ

    Youtube Video

    Gangster Lawrence Bishnoi:لارنس بشنوئی کافی عرصے سے سلمان خان کے پیچھے ہیں۔ گزشتہ ماہ یہ خبر آئی تھی کہ لارنس بشنوئی گینگ کے تین افراد نے سلمان خان اور ان کے والد سلیم خان کو ایک خط میں دھمکی دی تھی۔ مبینہ طور پر کہا گیا تھا کہ ان کا حشر بھی سدھو موسی والا جیسا ہوگا۔ سدھو کو 29 مئی کو مانسا، پنجاب میں اندھا دھند فائرنگ کر کے قتل کر دیا گیا تھا۔

    • Share this:
      نئی دہلی : گینگسٹر لارنس بشنوئی (Lawrence Bishnoi)نے مبینہ طور پر انکشاف کیا ہے کہ انہوں نے 2018 میں بالی ووڈ اداکار سلمان خان(Salman Khan) کے قتل کے لیے تمام تیاریاں کر لی تھیں۔ اس کے لیے انھوں نے ایک جدید رائفل (Rifle)بھی خریدی تھی، جس کے لیے انھوں نے 4 لاکھ روپے ادا کیے تھے۔ لارنس بشنوئی اس وقت پنجابی گلوکار سدھو موسی والا کے قتل کے الزام میں پنجاب پولیس کی حراست میں ہیں۔ اس سے پہلے دہلی پولیس نے ان سے پوچھ گچھ کی تھی۔ دہلی پولیس کے اسپیشل سیل کے ذرائع نے نیوز 18 کو بتایا کہ لارنس نے سلمان کو مارنے کی وجہ بھی بتائی۔ انہوں نے مبینہ طور پر کہا کہ وہ چنکاروں کے شکار پر سلمان خان سے ناراض ہیں کیونکہ چنکارے ہریانہ، راجستھان اور پنجاب میں بشنوئی برادری کو پیارے ہیں۔

      1998 میں راجستھان کے جودھ پور میں فلم 'ہم ساتھ ساتھ ہیں' کی شوٹنگ کے دوران سلمان خان کے خلاف چنکارا کے غیر قانونی شکار کا معاملہ سامنے آیا تھا۔ سلمان کو جودھ پور کی عدالت نے اپریل 2018 میں دو کالے ہرن مارنے کے جرم میں پانچ سال قید کی سزا سنائی تھی۔ سلمان نے اس سزا کو بالائی عدالت میں چیلنج کیا ہے۔ اس معاملے میں سلمان کو کچھ وقت جودھ پور جیل میں بھی رہنا پڑا۔ بعد میں انہیں بھرت پور جیل منتقل کر دیا گیا۔

      یہ بھی پڑھیں

      لارنس بشنوئی نے پولیس کی پوچھ گچھ میں مبینہ طور پر اعتراف کیا کہ اس نے راج گڑھ کے رہنے والے سمپت نہرا کو سلمان خان کو قتل کرنے کے لیے پیغامات بھیجے تھے۔ نہرا اس وقت مفرور تھیں۔ ذرائع کے مطابق لارنس نے بتایا کہ سمپت نہرا کو سلمان کو مارنے کے لیے ممبئی بھیجا گیا تھا۔ انہوں نے اداکار کے گھر کی ریکی بھی کی۔ لیکن نہرا کے پاس صرف ایک پستول تھا۔ اس کے پاس لمبی رینج والی رائفل نہیں تھی۔ جس کی وجہ سے وہ سلمان پر حملہ نہیں کر سکے۔

      لارنس نے مبینہ طور پر پولیس کو بتایا کہ اس کے بعد ہی اس نے آر کے سپرنگ رائفل خریدنے کا فیصلہ کیا۔ لارنس کے مطابق اس نے دنیش ڈگر نامی شخص کو یہ رائفل خریدنے کا حکم دیا تھا۔ اس کے لیے 4 لاکھ روپے بھی ادا کیے گئے۔ یہ ادائیگی ڈگر کے ساتھی انیل پانڈے کو کی گئی۔ تاہم، 2018 میں، یہ رائفل پولیس نے ڈگر کے قبضے سے برآمد کی تھی۔

      لارنس بشنوئی کافی عرصے سے سلمان خان کے پیچھے ہیں۔ گزشتہ ماہ یہ خبر آئی تھی کہ لارنس بشنوئی گینگ کے تین افراد نے سلمان خان اور ان کے والد سلیم خان کو ایک خط میں دھمکی دی تھی۔ مبینہ طور پر کہا گیا تھا کہ ان کا حشر بھی سدھو موسی والا جیسا ہوگا۔ سدھو کو 29 مئی کو مانسا، پنجاب میں اندھا دھند فائرنگ کر کے قتل کر دیا گیا تھا۔
      Published by:Mirzaghani Baig
      First published: