ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بے قابو کورونا کو لے کر دہلی میں پھر پابندیاں، شادی اور آخری رسوم کو لےکر کیجریوال حکومت کی نئی گائڈ لائنس

کورونا وائرس کے بڑھتے انفیکشن کو دیکھتے ہوئے دہلی حکومت نے تقریبات سے متعلق نئی گائڈ لائنس جاری کی ہیں۔ ان پر اب سختی سے عمل کیا جائے گا۔

  • Share this:
بے قابو کورونا کو لے کر دہلی میں پھر پابندیاں، شادی اور آخری رسوم کو لےکر کیجریوال حکومت کی نئی گائڈ لائنس
کیجریوال حکومت نے بے قابو کورونا کوکنٹرول کرنے کے لئے جاری کی نئی گائڈ لائنس

نئی دہلی: کورونا وائرس کے بڑھتے انفیکشن کو دیکھتے ہوئے ایک بار پھر دہلی حکومت (Delhi Government) نے بڑا فیصلہ کیا ہے۔ اب شادی تقریب یا دیگر کسی تقریب انعقاد میں تقریب ہال کی صلاحیت کے 50 فیصد ہی لوگ شامل ہوسکیں گے اور یہ تعداد بھی 100 لوگوں سے زیادہ نہیں ہوگی۔ وہیں کھلے میدان میں ہونے والی تقریب میں یہ تعداد 200 لوگوں کی ہوگی۔ دہلی حکومت کے حکم مطابق، اب آخری رسوم اور اس سے متعلقہ تقریب میں 50 سے زیادہ شامل نہیں ہوسکیں گے۔ اس دوران کورونا گائڈ لائنس کا سختی سے عمل کرنا ہوگا۔




کیجریوال حکومت کے مطابق، کسی بھی پروگرام یا انعقاد کے دوران کورونا گائڈلائنس کا انعقاد کے ساتھ ہی مہمانوں کو بھی عمل کرنا ہوگا۔ اس دوران تھرمل اسکیننگ کے ساتھ ہی سبھی کو ماسک لگانا لازمی ہوگا۔ وہیں سوشل ڈیسٹنسنگ اور سینیٹائزیشن کا بھی پورا دھیان رکھنا ہوگا۔



لاک ڈاون کے موڈ میں نہیں حکومت

اس سے پہلے دہلی کے وزیر صحت ستیندر جین نے لاک ڈاون نہیں کرنے کے اشارے دیئے تھے۔ وزیرکا ماننا ہے کہ کورونا روکنے روکنے کے لئے لاک ڈاون حل نہیں ہے۔ دہلی کے وزیر صحت ستیندر جین نے کہا کہ ’لاک ڈاون کا کوئی امکان نہیں ہے۔ لاک ڈاون کرکے دیکھا گیا تھا، اس کے پیچھے ایک لاجک تھا۔ اس وقت کسی کو نہیں معلوم تھا کہ وائرس کیسے پھیلتا ہے۔ تب کہا گیا تھا کہ متاثر ہونے سے لے کر ختم ہونے تک 14 دن کا سائیکل ہے۔ تب ایکسپرٹ کا کہنا تھا کہ اگر 21 دنوں کے لئے ایکٹویٹی کو لاک کردیں تو وائرس پھیلانا بند ہوجائے گا۔ پھر بھی لاک ڈاون بڑھتا گیا، لیکن اس کے باوجود کورونا ختم نہیں ہوا۔ مجھے لگتا ہے کہ لاک ڈاون حل نہیں ہے۔

قابل ذکر ہے کہ دہلی میں مسلسل کئی دنوں سے کورونا متاثرین کی تعداد میں اضافہ ہو رہا ہے۔ 27 مارچ کو جاری دہلی حکومت کے اعدادوشمار کے مطابق، دہلی میں مسلسل تیسرے دن 1500 سے زیادہ معاملے سامنے آئے ہیں۔ گزشتہ 24 گھنٹوں میں 1558 نئے معاملے سامنے آئے ہیں۔ دہلی میں موت کے اعدادوشمار میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں میں 10 مریضوں کی موت ہوئی ہے۔ 23 جنوری کے بعد سب سے زیادہ موت کا اعدادوشمار سامنے آیا ہے۔ 23 جنوری کو بھی 24 گھنٹوں میں 10 مریضوں کی موت ہوئی تھی۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Mar 27, 2021 11:54 PM IST