உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    راجستھان میں گہلوت کابینہ کی تشکیل نو سے پہلے سبھی وزرا نے دیا استعفی

    راجستھان میں گہلوت کابینہ کی تشکیل نو سے پہلے سبھی وزرا نے دیا استعفی

    راجستھان میں گہلوت کابینہ کی تشکیل نو سے پہلے سبھی وزرا نے دیا استعفی

    Rajasthan Cabinet Expansion Latest News: راجستھان میں گہلوت کابینہ کی تشکیل نو سے پہلے سبھی وزرا نے استعفی دیدیا ہے ۔ وزرا کی کونسل کی میٹنگ میں سبھی وزرا نے استعفے دئے ۔

    • Share this:
      جے پور : راجستھان میں گہلوت کابینہ کی تشکیل نو سے پہلے سبھی وزرا نے استعفی دیدیا ہے ۔ وزرا کی کونسل کی میٹنگ میں سبھی وزرا نے استعفے دئے ۔ حالانکہ ذرائع کے مطابق آج وزیر اعلی گہلوت گورنر سے ملاقات نہیں کریں گے ۔ اتوار کو دو بجے سبھی ممبران اسمبلی کو ریاستی پارٹی کے دفتر میں بلایا گیا ہے ۔ ذرائع کے مطابق اتوار کو حلف برداری کی تقریب ہوگی ۔

      گہلوت کابینہ میں فی الحال بارہ سیٹیں خالی ہیں ۔ ذرائع کے مطابق گہلوت ۔ پائلٹ کے درمیان عہدوں کی تقسیم کا فارمولہ طے ہوچکا ہے ۔ چھ گہلوت کوٹے سے اور چار پائلٹ کوٹے سے وزیر بن سکتے ہیں ۔ کابینہ میں دو سیٹیں خالی رہیں گی ۔ تقریبا 15 پارلیمانی سکریٹری بنائے جاسکتے ہیں ۔

      اس درمیان وزیر اعلی اشوک گہلوت نے کہا ہے کہ کس کی لاٹری کھلے گی اور کیا ہوگا ، یہ سب ہائی کمان طے کرے گا ۔ ذرائع کے مطابق وزیر اعلی اشوک گہلوت کو ایک جھٹکا یہ بھی لگ سکتا ہے کہ بی ایس پی سے کانگریس میں شامل ہوئے ممبران اسمبلی کو کابینہ میں موقع نہیں ملے گا ۔ اسی طرح سرکار کو حمایت دے رہے آزاد ممبران اسمبلی کو بھی وزیر نہیں بنایا جائے گا ۔

      سچن پائلٹ کی مانگ کے بعد کانگریس ہائی کمان طے کرچکا ہے کہ فی الحال آزاد اور بی اے پی سے کانگریس میں شامل ہوئے چھ ممبران اسمبلی کو وزیر نہ بنا جائے ۔ حالانکہ گہلوت وزیر بنانا چاہتے ہیں ۔ مانا جارہا ہے کہ دیگر ناراض ممبران اسمبلی کو منانے کیلئے انہیں پارلیمانی سکریٹری بنایا جاسکتا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: