உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ملکہ الیزابیتھ-دوئم: جب حیدرآباد کے نظام نے ملکہ کو 300 ہیروں سے جڑا ہارپیش کیا، جانئے مکمل کہانی

    ملکہ الیزابیتھ-دوئم: نظام کے ذریعہ دیئے گئے ہار کو پہنے ہوئے۔ (تصویر: انسٹا گرام/@theroyalfamily)

    ملکہ الیزابیتھ-دوئم: نظام کے ذریعہ دیئے گئے ہار کو پہنے ہوئے۔ (تصویر: انسٹا گرام/@theroyalfamily)

    ملکہ الیزابتھ دوئم نے اپنی پوری زندگی میں ایک فیشن آئیکن مانا جاتا تھا اور مبینہ طور پر دنیا کے کچھ سب سے مہنگے زیورات کی مالکن تھیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Hyderabad, India
    • Share this:
      لندن: برطانیہ کی سب سے لمبے وقت تک راج کرنے والی ملکہ الیزابتھ دوم کا 96 سال کی عمر میں گزشتہ جمعرات کو اسکاٹ لینڈ کے بال مورل محل میں انتقال ہوگیا۔ ملکہ کو اپنی پوری زندگی میں ایک فیشن آئیکن مانا جاتا تھا اور وہ مبینہ طور پر دنیا کے کچھ سب سے مہنگے زیورات کی مالکن تھیں۔ ان کی ملکیت والے کئی مشہور اشیا میں سے ایک حیدرآباد کے نظام کے ذریعہ شادی کے تحفے کے طور پر دیا گیا ایک ہیرا جڑا ہوا ہار تھا۔

      رائل فیملی کے انسٹا گرام پوسٹ میں شیئر کی گئی تصاویر میں ملکہ الیزابتھ دوئم اور کیٹ مڈلٹن نیک لیس پہنے ہوئے دکھائی دے رہی ہیں۔ آپ بھی دیکھیں رائل فیملی کے ذریعہ شیئر کی گئی پوسٹ…

       



       




      View this post on Instagram





       

      A post shared by The Royal Family (@theroyalfamily)






      سال 1947 میں حیدرآباد کے نظام آصف جاہ VII نے مہارانی کو ان کی شادی کے تحفے کے طور پر ہار پیش کیا تھا۔ شاہی فیملی نے نیک لیس کو اپنے انسٹا گرام پر شیئر کیا ہے۔ رائل فیملی نے کیپشن میں لکھا، ’نظام نے لندن میں سختی سے زور دیا گیا کہ شہزادی الیزابتھ اپنی شادی کا تحفہ خود منتخب کریں، انہوں نے تقریباً 300 ہیروں سے جڑے اس پلاٹینم ہار کا انتخاب کیا۔

      ملکہ الیزابتھ دوئم نے اپنی مدت کار میں ہار پہننا جاری رکھا، شاہی فیملی کے سوشل میڈیا ہینڈل نے کہا کہ بادشاہ نے یہ ہار دی ڈچیس آف کیمبرج کیٹ مڈلٹن کو بھی قرض دیا تھا۔ ملکہ کا یہ ہار بکنگھم پیلیس میں نمائش کا حصہ ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: