بی جے پی لیڈر یدی یورپا کو راحت: چالیس کروڑ کے رشوت معاملہ میں سی بی آئی کورٹ سے بری

سی بی آئی کی خصوصی عدالت نے رشوت اسکینڈل میں پھنسے بی جے پی لیڈر اور کرناٹک کے سابق وزیر اعلی بی ایس یدی یورپا کو بری کر دیا۔

Oct 26, 2016 01:03 PM IST | Updated on: Oct 26, 2016 01:03 PM IST
بی جے پی لیڈر یدی یورپا کو راحت: چالیس کروڑ کے رشوت معاملہ میں سی بی آئی کورٹ سے بری

نئی دہلی۔ سی بی آئی کی خصوصی عدالت نے رشوت اسکینڈل میں پھنسے بی جے پی لیڈر اور کرناٹک کے سابق وزیر اعلی بی ایس یدی یورپا کو بری کر دیا۔ یدی یورپا پر 40 کروڑ کی رشوت لینے کا الزام تھا۔ کورٹ نے ان کے خاندان کے اراکین کو بھی تمام الزامات سے آزاد کر دیا۔ آج الزامات سے بری ہونے کے بعد یدی یورپا نے کہا کہ مجھے خدا پر بھروسہ تھا اور اس کا مجھے انعام بھی ملا۔

سی ایم رہنے کے دوران یدی یورپا پر بدعنوانی کے سنگین الزامات لگے تھے۔ اس کے چلتے بی جے پی ہائی کمان سے ان کا تنازعہ ہو گیا تھا اور پارٹی نے وزیر اعلی کے عہدے سے ان کا استعفی دلوا دیا۔ جھگڑا اتنا بڑھا کہ 2012 میں انہوں نے بی جے پی چھوڑ دی۔ لیکن سال 2014 میں لوک سبھا انتخابات کے دوران وہ پارٹی میں واپس آئے۔

Loading...

بی جے پی کے مرکز میں اقتدار میں آنے کے بعد پارٹی کے قومی صدر امت شاہ نے بڑے ردوبدل کے تحت 11 نائب صدور میں بی ایس یدی یورپا کو بھی شامل کیا تھا۔ ان پر سی ایم رہنے کے دوران کان کنی اسکینڈل کے سنگین الزام لگے تھے۔ انہوں نے 2008 میں کرناٹک کے وزیر اعلی کی کمان سنبھالی تھی جو جنوبی ہندوستان میں پہلی بی جے پی حکومت والی ریاست تھی۔

Loading...