உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بی ایس یدی یورپا نے وزیر اعلی کے عہدہ سے دیا استعفی ، کہا : دو ماہ پہلے ہی لے لیا تھا فیصلہ

    بی ایس یدی یورپا نے وزیر اعلی کے عہدہ سے دیا استعفی ، کہا : دو ماہ پہلے ہی لے لیا تھا فیصلہ ۔ فائل فوٹو ۔

    یدی یورپا نے (BS Yediyurappa) نے اپنے استعفی کی جانکاری ان کی سرکار کو 26 جولائی کو دو سال پورے ہونے پر منقعدہ ایک پروگرام میں دی ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : گزشتہ کچھ دنوں سے چل رہی قیاس آرائی کے درمیان کرناٹک کے وزیر اعلی بی ایس یدی یورپا نے پیر کو اپنے عہدہ سے استعفی دیدیا ۔ وہ گورنر سے ملاقات کرنے کیلئے راج بھون پہنچے اور اس کے بعد انہوں نے اپنا استعفی گورنر کے سپرد کیا ۔ یدی یورپا نے نے اپنے استعفی کی جانکاری ان کی سرکار کو 26 جولائی کو دو سال پورے ہونے پر منقعدہ ایک پروگرام میں دی ۔

      بی ایس یدی یورپا پہلے ہی اس بات امکان ظاہر کرچکے تھے کہ شاید 25 جولائی کو ان کا وزیر اعلی کے طور پر آخری دن ہوگا ۔ ان کا کہنا تھا کہ 25 جولائی کو مرکزی قیادت انہیں جو بھی ہدایت دے گی ، وہ 26 جولائی سے اسی کے مطابق کام شروع کریں گے ۔ ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ وزیر اعظم نریندر مودی ، وزیر داخلہ امت شاہ اور بی جے پی صدر جے پی نڈا پر انہیں پورا بھروسہ ہے ۔ اعلی قیادت جو بھی ہدایت دے گی ، انہیں وہ منظور ہوگا ۔


      ہفتہ کو اس بارے میں انہوں نے کہا تھا کہ وزیر اعلی عہدہ کا حلف لینے کے پہلے دن سے ہی انہوں نے کئی چیلنجز کا سامنا کیا ، لیکن وہ لوگوں کی زندگی کو بہتر بنانے کیلئے ایمانداری کے ساتھ کئے گئے کام کو لے کر مطمئن ہیں ۔

      بی ایس یدی یورپا نے گزشتہ روز کو کہا تھا کہ وہ اس عہدہ پر برقرار رہیں گے یا نہیں کل تک پتہ چل جائے گا ۔ ساتھ ہی انہوں نے کہا کہ وہ اگلے دس سے پندرہ سالوں تک بھارتیہ جنتا پارٹی کیلئے کام کرتے رہیں گے ۔ یدی یورپا کرناٹک کے لنگایت کمیونٹی سے آتے ہیں ۔ کمیونٹی میں ان کی اچھی گرفت مانی جاتی ہے ۔

      وہیں کرناٹک کے نئے وزیر اعلی کی ریس میں بھی بی جے پی کے کچھ لیڈروں کا نام سامنے آرہا ہے ۔ ان میں پرہلاد جوشی ، بی ایل سنتوش ، سی ٹی راو ، ایم آر نرانی ، باسوراج بومئی ، اروند بیلاڑ اور باسن گوڑا پاٹل وغیرہ کے نام اہم ہیں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: