உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کورونا کی تیسری لہر میں ہونے جارہے بجٹ سیشن کی تیاری پوری، MP's کو کرانا ہوگا RT-PCR ٹیسٹ

    کورونا کی تیسری لہر میں ہونے جارہے بجٹ سیشن کی تیاری پوری، MP's کو کرانا ہوگا RT-PCR ٹیسٹ

    کورونا کی تیسری لہر میں ہونے جارہے بجٹ سیشن کی تیاری پوری، MP's کو کرانا ہوگا RT-PCR ٹیسٹ

    راجیہ سبھا کے چیئرمین ایم وینکیا نائیڈو نے اتوار کو لوک سبھا اسپیکر اوم برلا کے ساتھ مل کر پیر سے شروع ہونے والے بجٹ اجلاس کی تیاریوں کا جائزہ لیا ۔ اس دوران لوک سبھا اور راجیہ سبھا سکریٹریٹ کے سینئر افسران بھی ان کے ساتھ موجود تھے ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : راجیہ سبھا کے چیئرمین ایم وینکیا نائیڈو نے اتوار کو لوک سبھا اسپیکر اوم برلا کے ساتھ مل کر پیر سے شروع ہونے والے بجٹ اجلاس کی تیاریوں کا جائزہ لیا ۔ اس دوران لوک سبھا اور راجیہ سبھا سکریٹریٹ کے سینئر افسران بھی ان کے ساتھ موجود تھے ۔ یہ ملاقات نائب صدر کی سرکاری رہائش گاہ پر ہوئی ۔ ملاقات تقریباً 40 منٹ تک جاری رہی ۔

      نائب صدر وینکیا نائیڈو اور لوک سبھا اسپیکر اوم برلا نے تمام ممبران پارلیمنٹ سے بجٹ اجلاس کے آغاز سے 48 گھنٹے قبل آر ٹی پی سی آر ٹیسٹ کرانے کی درخواست کی۔ کورونا کی تیسری لہر کے پیش نظر بجٹ اجلاس کے دوران پارلیمنٹ میں خصوصی انتظامات کئے گئے ہیں۔ ہر ایک ممبر پارلیمنٹ کے درمیان مناسب سماجی دوری ہو ، اس کا بھی دھیان رکھا گیا ہے ۔

      بجٹ اجلاس کے دوران راجیہ سبھا اور لوک سبھا کے وقت میں بھی تبدیلی کی گئی ہے۔ پہلے دو دن وقفہ سوالات ور وقفہ صفر نہیں ہوں گے ۔ راجیہ سبھا صبح 10 بجے سے سہ پہر 3 بجے تک کام کرے گی، جب کہ لوک سبھا پہلے دو دن چھوڑ کر شام 4 بجے سے رات 9 بجے تک کام کرے گی ۔ بجٹ پیش کرنے سے قبل صدر پیر کو دونوں ایوانوں سے خطاب کریں گے۔ اس کے بعد وزیر خزانہ نرملا سیتا رمن سال 2021-22 کا اقتصادی سروے پیش کریں گی۔ اگلے دن یعنی منگل یکم فروری کو حکومت مرکزی بجٹ پیش کرے گی۔

      لوک سبھا سکریٹریٹ کے بلیٹن کے مطابق کورونا وائرس وبا کے پیش نظر ایوان زیریں کے اجلاس کے دوران دونوں ایوانوں کے چیمبرز اور گیلریوں کو ارکان کے بیٹھنے کے لئے استعمال کیا جائے گا۔ بجٹ اجلاس کے دوران کل 29 نشستیں ہوں گی، جس میں پہلے مرحلے میں 10 اور دوسرے مرحلے میں 19 نشستیں ہوں گی۔ بجٹ اجلاس کا انعقاد ایسے وقت میں کیا جا رہا ہے جب پانچ ریاستوں اتر پردیش، اتراکھنڈ، گوا، پنجاب اور منی پور میں اسمبلی انتخابات ہونے جا رہے ہیں۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: