مودی حکومت کا کرپشن کے خلاف ایک اور سخت قدم ! 15 سینئر افسروں کو زبردستی کیا ریٹائر

مرکز کی نریندر مودی حکومت نے بڑا قدم اٹھاتے ہوئے 15 انکم ٹیکس افسران کو ریٹائر کردیا ہے ۔ سی بی ڈی ٹی نے 15 سینئر افسروں کو زبردستی ریٹائر کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

Sep 27, 2019 09:36 PM IST | Updated on: Sep 27, 2019 09:36 PM IST
مودی حکومت کا کرپشن کے خلاف ایک اور سخت قدم ! 15 سینئر افسروں کو زبردستی کیا ریٹائر

مودی حکومت کا کرپشن کے خلاف ایک اور سخت قدم ! 15 سینئر افسروں کو زبردستی کیا ریٹائر

مرکز کی نریندر مودی حکومت نے بڑا قدم اٹھاتے ہوئے 15 انکم ٹیکس افسران کو ریٹائر کردیا ہے ۔ سی بی ڈی ٹی نے 15 سینئر افسروں کو زبردستی ریٹائر کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اس سال جون میں بھی ایسا ایک فیصلہ کیا گیا تھا ، اس میں انڈین ریوینیو سروسز کے 27 افسروں کو زبردستی ریٹائر کردیا گیا تھا ۔ اس میں سی بی ڈی ٹی کے 12 افسران شامل تھے ۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق جن ٹیکس افسران کے خلاف بدعنوانی کے الزامات ہیں ، ان کے خلاف کارروائی کی گئی ہے ۔ آپ کو بتادیں کہ وزیر اعظم مودی نے 15 اگست کو لال قلعہ سے تقریر کرتے ہوئے بھی ٹیکس افسران کے ذریعہ استحصال کئے جانے پر تشویش کا اظہار کیا تھا ۔

اس قانون کے تحت ہوئی کارروائی

سینٹرل سول سروسز 1972 کے قانون 56 ( جے ) کے تحت 30 سال تک سروس پوری کرچکے یا 50 سال کی عمر تک پہنچ چکے افسران کی سروسز حکومت ختم کرسکتی ہے ۔

Loading...

مرکزی حکومت ان افسران کو نوٹس اور تین ماہ کی تنخواہ اور بھتہ دے کر گھر بھیج سکتی ہے ۔ ایسے افسران کے کام کا ہر تیسرے ماہ تجزیہ کیا جاتا ہے اور اگر ان کے خلاف بدعنوانی یا بے ضابطگی کے الزامات پائے جاتے ہیں تو زبردستی ریٹائر کیا جاسکتا ہے ۔

مرکزی حکومت کے پاس یہ بھی آپشن کئی سالوں سے موجود ہے ، لیکن زیادہ تر وقت اس پر سنجیدگی سے کارروائی نہیں کی جاتی تھی ، اس قانون میں اب تک گروپ اے اور بی کے افسران ہی شامل تھے ، مگر اب گروپ سی کے افسران بھی اس کے دائرہ میں آگئے ہیں ۔

Loading...