سی بی آئی بمقابلہ سی بی آئی: افسر نے اجیت ڈوبھال پر لگایا سنگین الزام

دو ہزار بیچ کے آئی پی ایس افسر منیش کمار نے 30 صفحات کی درخواست میں الزام لگایا ہے کہ کاروباری منوج پرساد نے تحقیقات کے دوران کہا تھا کہ اس کے والد کے قومی سلامتی کے مشیر (این ایس اے) اجیت ڈوبھال کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں

Nov 20, 2018 09:55 AM IST | Updated on: Nov 20, 2018 09:56 AM IST
سی بی آئی بمقابلہ سی بی آئی: افسر نے اجیت ڈوبھال پر لگایا سنگین الزام

قومی سلامتی کے مشیر (این ایس اے) اجیت ڈوبھال: فائل فوٹو۔

سی بی آئی میں جاری داخلی تنازع ختم ہوتا نظر نہیں آ رہا ہے۔ سی بی آئی کے ایک اور افسر منیش کمار سنہا نے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایا ہے۔ سنہا نے الزام لگایا ہے کہ گرفتار تاجر منوج پرساد نے قومی سلامتی کے مشیر (این ایس اے) اجیت ڈوبھال اور مرکزی وزیر ہری بھائی پارتھی بھائی چودھری اور سی وی سی کیوی چودھری کا نام لے کر راکیش استھانہ کے خلاف تحقیقات کو متاثر کرنے کی کوشش کی۔

اس معاملہ میں ردعمل طلب کئے جانے پر چودھری نے کوئی ردعمل ظاہر نہیں کیا۔ ردعمل جاننے کے لئے ڈوبھال سے رابطہ نہیں ہو پایا۔ وزیر کے دفتر کے ایک افسر نے کہا کہ وہ اس معاملہ سے واقف نہیں ہیں۔

Loading...

سی بی آئی اسپیشل ڈائریکٹر راکیش استھانہ کے خلاف لگے الزامات کی تحقیقات کر رہے سنہا نے کورٹ سے مطالبہ کیا ہے کہ ان کے ناگپور ٹرانسفر کو رد کیا جائے۔ اس کے ساتھ ہی سنہا نے اپنی عرضی میں استھانہ کے خلاف درج ایف آئی آر پر ایس آئی ٹی جانچ کی مانگ کی ہے۔

دو ہزار بیچ کے آئی پی ایس افسر منیش کمار نے 30 صفحات کی درخواست میں الزام لگایا ہے کہ کاروباری منوج پرساد نے تحقیقات کے دوران کہا تھا کہ اس کے والد کے قومی سلامتی کے مشیر (این ایس اے) اجیت ڈوبھال کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں۔ منوج پرساد کو 16 اکتوبر کو سی بی آئی نے رشوت کے کیس میں گرفتار کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: رافیل گھوٹالے کا سچ سامنے آنے کے خوف سے سی بی آئی کے ڈائریکٹر کو ہٹایا گیا : راہل گاندھی

منوج پرساد کو ایک اور تاجر ستیش بابو سنا سے 5 کروڑ کی رشوت مانگنے کے معاملہ میں گرفتار کیا گیا تھا۔ سنا کے مطابق، منوج پرساد سی بی آئی کے خصوصی ڈائریکٹر راکیش استھانہ کی طرف سے ڈیل کر رہا تھا اور اس نے وعدہ کیا تھا کہ اگر 5 کروڑ روپئے دئے گئے تو سی بی آئی اس پر سختی نہیں کرے گی۔

Loading...